انٹرنیشنل

غزہ جنگ بندی، نو منتخب برطانوی وزیراعظم کا اسرائیل سے دو ٹوک مطالبہ

برطانوی وزیراعظم سر کیئر اسٹارمر نے اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو سے ٹیلی فونک گفتگو میں غزہ جنگ بندی اور دو ریاستی حل کی ضرورت پر زور دیا

برطانیہ (مانیٹرنگ ڈیسک) غزہ میں جنگ بندی کے معاملے پر برطانیہ کے نو منتخب وزیراعظم سرکیئر اسٹارمر نے اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہور سے دو ٹوک اور حیران کن مطالبہ کر دیا ہے۔

انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق برطانوی وزیراعظم اسٹارمر نے تمام فریقین کواحتیاط سے کام لینے کا مشورہ دیا اور غزہ میں فوری جنگ بندی، یرغمالیوں کی رہائی اور غزہ میں انسانی امداد کی رسائی کی فوری ضرورت پر زور دیا۔برطانوی وزیراعظم کے دفتر کے مطابق وزیراعظم اسٹارمر نے نیتن یاہو سے غزہ اور لبنان کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا اور اسرائیل کی شمالی سرحد کی صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا۔ وزیراعظم اسٹارمر نے فلسطینی صدر محمود عباس کو بتایا کہ برطانیہ کی امن عمل میں تعاون کو تسلیم کرنے کی دیرینہ پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں آئی، امن عمل کا راستہ فلسطینیوں کا ناقابل تردید حق ہے۔ برطانوی وزیراعظم نے فلسطینی صدر سے بھی ٹیلیفون پر بات کی اور فلسطین کی بین الاقوامی قانونی حیثیت کا یقین دلایا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button