دلچسپ و عجیب

’گریجویٹ‘ کالی بلیوں کے لئےبناگئےکیفےکی دھوم

کیفےکےمالک یاگی کوسیاہ بلیوں کا ہوٹل بنانےکا خیال آیا جواب دنیا بھرمیں مقبول ہوچکا ہے

کالی بلی راستہ کاٹ جائےتواسےبرا شگون سمجھا جاتا ہےلیکن جاپان میں ایک صاحب کوکالی بلیاں اتنی پسند ہیں کہ انہوں نےصرف شیرکی سیاہ خالاؤں کےلیےایک کیفےکھولا ہےجسے’’نیکوبیاکا‘‘ کا نام دیا گیا ہے۔ جاپان میں اس وقت بلیوں کےسیکڑوں کیفےہیں جبکہ نیکوبیاکا صرف سیاہ رنگت والی بلیوں کےلیےمخصوص ہے۔ اس کا افتتاح 2013ء میں کیا گیا تھا۔ اس کےبعد ہرروزسیاحوں کی بڑی تعداد اس کیفے کودیکھنے آتی ہے۔ دلچسپ بات یہ ہےکہ دنیا کےدیگرممالک کی طرح جاپان میں بھی سیاہ بلیوں کےمقابلےمیں دیگررنگوں کی بلیوں کودیکھا اوررکھا جاتا ہے۔ اسی بنا پرکیفےکےمالک یاگی کوسیاہ بلیوں کا ہوٹل بنانےکا خیال آیا جواب دنیا بھرمیں مقبول ہوچکا ہے۔

نیکوبیاکا میں بلیاں اپنی ہم رنگ سیاہ بلیوں کےساتھ کھیلتی، کھاتی اورآرام کرتی ہیں۔ یہی وجہ ہے جاپان میں کالی بلیوں سے وابستہ توہمات کو ختم کرنےمیں بھی اس کیفےنےاہم کردارادا کیا ہے۔ جاپانی قدیم داستانوں میں بلیوں کوپراسراربھی سمجھا جاتا ہے۔ اپریل 2020ء میں نیکوبیاکا سے’گریجویٹ‘ ہونےوالی بلیوں کی تعداد 321 سےزائد ہوچکی تھی۔ جیسے ہی کوئی بلی یہاں سے باہرجاتی ہے کیفےکےمالک ایک اوربلی لے آتے ہیں اوراس طرح ایک وقت میں 10 بلیاں موجود رہتی ہیں۔ یہ بلیاں یہاں پرکئی کرتب بھی سیکھتی ہیں اورہربلی کےگلے میں ایک خاص رنگ کی رِبن ڈالی جاتی ہے۔ سیاہ بلیوں کےلیےلذیذ کھانوں کا ایک مکمل مینوبھی موجود ہے۔

کیفے میں داخل ہونے کی فیس 10 ڈالر ہے جس کے تحت لوگ صرف ایک گھنٹہ گزار سکتے ہیں۔ یہاں انسانوں کے لیے بھی کھانے رکھے ہیں اور بلیوں کے متعلق لٹریچر اور جرائد بھی موجود ہیں تاہم کورونا وائرس کی وبا کے دوران اس کیفے کو شدید مالی نقصان ہوا۔ نقصان کے بعد یاگی نے لوگوں سے آن لائن مدد کی درخواست کی جس کے بعد چند دنوں میں 11 ہزار ڈالر کی رقم جمع ہوگئی اور یوں کیفے کا نظام  چل پڑا بلکہ لوگ اب بھی عطیہ دے رہے ہیں۔

Back to top button