دلچسپ و عجیب

کیا آپ جانتے ہیں کہ "اومی کرون” کےنام پرمیوزک بینڈ بھی تھا؟

امریکی جریدے نےانکشاف کیا ہےکہ ’اومیکرون‘ صرف کورونا کا نام نہیں بلکہ اسی نام کا ایک میوزک بینڈ بھی تھا

کیا آپ جانتےہیں کہ "اومی کرون” کےنام پرمیوزک بینڈ بھی تھا؟ امریکی جریدے ’رولنگ اسٹون‘ نےانکشاف کیا ہےکہ ’اومیکرون‘ صرف کورونا وائرس کےنئےویریئنٹ کا نام نہیں بلکہ ہانگ کانگ میں اسی نام کا ایک میوزک بینڈ بھی تھا۔ اگرچہ یہ زیادہ مشہورتونہیں تھا لیکن راک میوزک میں ایک اچھا مقام ضروررکھتا تھا۔ اومیکرون بینڈ کا تعلق ’پروگریسیومیٹل‘ قسم کےبینڈزسےتھا۔ اس قسم کےبینڈزراک اورہیوی میٹل میوزک کےامتزاج (فیوژن) سےنئی دھنیں تخلیق کرتےہیں۔

چاردوستوں،گلوکارلی ہینگ چین،کی بورڈسٹ ٹائیلریوئنگ،ڈرمرایلکس بیڈویل، اورسنتھیٹک گٹارسٹ ایڈم رابرٹشا کا بنایا ہوا اومیکرون بینڈ 2014 سے 2016 تک ہانگ کانگ کےکنسرٹس میں خاصا مقبول رہا۔ ان کا ارادہ ایک البم لانچ کرنےکا بھی تھا لیکن اپنی ذمہ داریوں اورمعاشی مسائل کی وجہ سے 2016 میں انہوں نےیہ بینڈ ختم کردیا اورالگ الگ ملکوں میں جا کرآباد ہوگئے۔

البتہ جب گزشتہ ہفتے کورونا وائرس کے نئے ویریئنٹ کا نام ’اومیکرون‘ رکھا گیا تو اس بینڈ کے ایک چاہنے والے نے اپنی سوشل میڈیا پوسٹ میں اومیکرون بینڈ کی تعریف کرتے ہوئے اسے یاد کیا۔ یہ خبر جلد ہی لی ہینگ چین تک بھی پہنچ گئی جو آج کل آسٹریلیا میں مقیم ہیں اور ایک سیکنڈری اسکول میں پڑھا رہے ہیں۔

اتفاق سےوہ اوران کے باقی ساتھی پچھلے ایک سال سےاپنا بینڈ دوبارہ شروع کرنےاورالبم لانچ کرنےکےلیے ایک دوسرے سے رابطے میں تھے جبکہ اس دوران وہ اسٹوڈیومیں ریکارڈ کیےگئے،اپنےکچھ گانےبھی جمع کرچکےتھے۔ یہ موقع غنیمت جانتےہوئےچین نے اپنے گانوں کی کچھ دھنوں کےحصےیوٹیوب پرڈال دیئے

’’یہ صحیح ہوا یا غلط، مجھے اس سے بحث نہیں۔ لیکن ہمارے بینڈ اور اگلے البم کی مشہوری کےلیے یہ بہت اچھا کام ہوگیا،‘‘ چین نے ہنستے ہوئے رولنگ اسٹون کے نمائندے کو بتایا۔

 

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.