شوبز

"فن کا اوتار”۔۔۔ کامیڈین امان اللہ کی یاد میں تعزیتی ریفرنس

"فن دا اوتار امان اللہ خان مرحوم” کے عنوان سے پنجاب آرٹس کونسل محکمہ اطلاعات و ثقافت پنجاب کے زیر اہتمام منعقدہ تعزیتی ریفرنس میں سردار کمال، نسیم وکی، سخاوت ناز، شاہد خان، سحر صدیقی سمیت دیگر فنکاروں نے امان اللہ خان مرحوم کی فن و ثقافت کے شعبہ کے لئے خدمات پر خراج تحسین کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم کے ذکر کے بغیر پاکستان میں سنجیدہ، اصلاحی اور ثقافتی تھیٹر اور مزاح کی تاریخ نامکمل ہے۔

نسیم وکی نے کہا کہ مرحوم کامیڈی کے سائنس دان ، کنگ تھے۔مرحوم کے صاحبزادے امانت علی بتایا کہ مرحوم انتہائی رحمدل اور سخی واقع ہوئے۔ جونئیر آرٹسٹ سحر صدیقی نے شعر پڑھ کر امان اللہ خان مرحوم کو خراج تحسین پیش کیا۔شاہد خان سمیت دیگر فنکار برادری نے امان اللہ خان مرحوم کی یاد میں تعزیتی اجلاس کے انعقاد پر پنجاب آرٹس کونسل اوپن ائیر تھیٹر باغ جناح انتظامیہ کی کاوش کو سراہا اور دیگر لیجنڈری فنکاروں کی یاد میں بھی ایسی نشستوں کے انعقاد کی تجویز دی۔ ڈائریکٹر ہیڈ کوارٹر پکار ابرار عالم نے فنکاروں کے لئے حکومتی ترجیحات اور اقدامات کا زکر کیا اور فنکاروں کو تنہا نہ چھوڑنے کا حکومتی موقف دہرایا۔

اس موقع پر فنکاروں نے مطالبہ کیا ہے حکومت امان اللہ کو سر کا خطاب دے۔

Back to top button