شوبز

بشریٰ انصاری کا مولانا طارق جمیل سےایکشن کا مطالبہ

اداکارہ نےمعروف عالمِ دین سےمطالبہ کیا ہےکہ وہ جنسی زیادتی کےبڑھتے واقعات کےخلاف احتجاج کریں

فلم وٹی وی انڈسٹری کی سینئراداکارہ بشریٰ انصاری نےمعروف عالمِ دین مولانا طارق جمیل سےمطالبہ کیا ہےکہ وہ جنسی زیادتی کےبڑھتے واقعات کےخلاف احتجاج کریں اوراپنی آوازبُلند کریں۔ ٖفوٹواینڈویڈیوشیئرنگ ایپ انسٹاگرام پربشریٰ انصاری نےاپنی ایک تصویرپوسٹ کرتے ہوئےجنسی زیادتی کےبڑھتےواقعات پرشدید برہمی کا اظہارکرتےہوئےاپنےجذبات بیان کیے۔ بشریٰ انصاری نے لکھا کہ ’ہم چاہتے ہیں کہ جنسی زیادتی کے گھناؤنے واقعات میں ملوث درندوں کو پھانسی دینے کے بجائے اُنہیں زندہ رکھا جائے اور اُنہیں اِس قدر تکلیف دی جائے کہ وہ اپنی آخری سانس تک تڑپتے رہیں۔‘

اداکارہ نے لکھا کہ ’جس طرح یہ مجرم عصمت دردی کرکے چھوٹے بچوں اور عورتوں کو تکلیف دیتے ہیں اُسی طرح اِن کو تکلیف دی جائے تاکہ اُن بےقصور روحوں کو سُکون مل سکے اور یہ درندے ہر ایک کے لیے عبرت کا نشان بن سکیں۔‘ اُنہوں نے حکام سے پُرزور مطالبہ کرتے ہوئے لکھا کہ ’میں مطالبہ کرتی ہوں کہ ان مجرمان کے ہاتھ پاؤں کاٹے جائیں تاکہ جو لوگ آج یا کل یہ گھناؤنا جرم کرنے کا سوچ رہے ہیں اُن کے دِلوں میں خوف آجائے۔‘

بشریٰ انصاری نےلکھا کہ ’پھانسی توکچھ دیرکی تکلیف ہےلیکن اصل تکلیف توعبرت کا نشان بنانا ہے۔‘آخرمیں اداکارہ نےمولانا طارق جمیل سےاحتجاج کا مطالبہ کرتےہوئےلکھا کہ ’مولانا طارق جمیل صاحب ہمیں آپ کی ضرورت ہیں، اِس سنگین مسئلےکےخلاف احتجاج کریں، دھرنا دیں،اپنی آوازبُلند کریں۔‘ واضح رہےکہ ملک میں جنسی زیادتی کےبڑھتےواقعات اورلاہورموٹروے کیس کےبعد سےجہاں کچھ شوبز فنکارمجرمان کی سرِعام پھانسی کےحق میں اپنی آوازبُلند کررہےہیں تووہیں کچھ فنکارایسےبھی ہیں جوپھانسی کی مخالفت کررہےہیں۔

Back to top button