شوبز

"طلبہ کی حمایت”۔۔۔شہزاد رائے کی چھترول کا مطالبہ

شہزاد رائے لاہور کی نجی یونیورسٹی میں سرعام ایک دوسرے کو پروپوز کرنے اور گلے ملنے پر دونوں طلبہ کی حمایت میں کھڑے ہوگئے تاہم اس بات پر انہیں تنقید کا بھی سامنا ہے۔

ٹوئٹر پر شہزاد رائے نے اپنے گانے کی ویڈیو شیئر کرتے ہوئے ٹوئٹ کی کہ ’ لڑکی کو سرعام مارنے پیٹے پر کوئی متوجہ نہیں ہوتا لیکن پیار سے گلے لگانا بہت بڑا جرم ہے ۔‘

شہزاد رائے کی ٹوئٹ پر مداحوں کی جانب سے انہیں سخت تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔فاروق نامی صارف نے شہزاد رائے کی ٹوئٹ پر تبصرہ کرتے ہوئے سوال کیا کہ سر جی: میں نے آپ کو ہمیشہ غلط پہلو پر کیوں پایا؟ آپ سماجی مسائل میں ہمیشہ غلط ہوتے ہیں، یہاں تک کہ یورپ میں بھی ایسا نہیں ہوتا کیونکہ یونیورسٹی پڑھنے اور سیکھنے کی جگہ ہے گلے لگنے یا پروپوز کرنے کی نہیں، اگر آپ کو یہ سب چیزیں پسند ہیں تو مغرب کی پیروی کریں ہم جنس پرست ہوں اور خوش رہیں۔

ایک صارف نے لکھا کہ سر اس وقت آپ غلط ہیں کیونکہ جب بھی کوئی عورت پر ہاتھ اٹھاتا ہے تو سب سے پہلے اس مرد کو منع کیا جاتا ہے نہ کہ عورت کو ۔

ایک اور صارف نے لکھا ہے کہ شہزاد رائے کو چھترول کی ضرورت ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button