شوبز

ادکارہ اقراء عزیز اُس وقت چڑ جاتی ہیں جب اُنھیں؟

اقراء عزیزآج کل بلاک بسٹرڈرامے’خدا ورمحبت‘ میں اپنی جاندار اداکاری سےپرستاروں کی توجہ اپنی جانب مبذول کراوئےہوئےہیں

ادکارہ اقراء عزیز اُس وقت چڑ جاتی ہیں جب اُنھیں؟ پاکستان کی خوبروادکارہ اقراء عزیزکا بتانا ہےکہ اُنہیں اکثرلوگوں کےجانب سےپکارے جانےوالےایک نک نیم سےچڑہےجوکہ وہ سننا نہیں چاہتی ہیں۔ یکےبعد دیگرے پاکستان شوبزانڈسٹری کوبہترین ڈرامےدینےوالی اقراء عزیزآج کل بلاک بسٹرڈرامے’خدا ورمحبت‘ میں اپنی جاندار اداکاری سےپرستاروں کی توجہ اپنی جانب مبذول کراوئےہوئےہیں۔

اقراء عزیزکی خدا اورمحبت میں حقیقت سےقریب تراداکاری اس ڈرامےکی کہانی کوچارچاند لگا رہی ہے۔ اقراء عزیزکوصف اول کی اداکاراؤں میں شمارکیا جاتا ہےاوراِن سےمتعلق شائقین جاننا بھی چاہتےہیں کہ اُن کی زندگی میں کیا چل رہا ہےاوراُن کی پسندیدہ اداکارہ کوکیا پسند ہےاورکیا نا پسند ہے۔

اقراء عزیزکا اپنےایک انٹرویوکےدوران بتانا ہےکہ وہ نئےنئےلوگوں سےملنےکی کافی چورثابت ہوئی ہیں،اُنہیں نئےلوگوں سےملنا جلنا نہیں آتا ہےجبکہ وہ لوگوں کےساتھ تھوڑا بہت دکھاوا کرتےہوئےضرورملتی ہیں۔

اقراء عزیز کا بتانا ہے کہ وہ آج جس بھی مقام پر ہیں اپنی اداکارانہ صلاحیتوں، محنت اورلگن کےسبب ہیں۔ اقراء عزیز کا ہنستے ہوئے کہنا تھا کہ اُن کا کام کے دوران سب سے پسندیدہ وقت کھانے کا بریک ہوتا ہے۔ اس انٹرویو کے دوران اقراء عزیز کا بتانا تھا کہ اُنہیں اکثر لوگ نِک نیم ’اِقو‘ کہہ کر پکارتے ہیں جو کہ اُنہیں بالکل پسند نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.