شوبز

شوبزانڈسٹری میں خواتین کے ساتھ سلوک؟زارانورعباس بول پڑیں

زارا نورعباس نےکہا کہ خواتین کے مقابلے میں مردوں کے لیے زیادہ آسانیاں ہیں

پاکستان شوبزانڈسٹری کی معروف اداکارہ زارا نورعباس کا کہنا ہےکہ پاکستان میں ناصرف سوشل میڈیا بلکہ شوبزانڈسٹری میں بھی خواتین کو صنفی تفریق کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ انہوں نے یہ بات یوٹیوب چینل کو دیے گئےایک انٹرویومیں کہی ہے۔ پاکستانی معاشرے میں خواتین کو درپیش صنفی تفریق کے مسائل کے حوالے سے بات کرتے ہوئے زارا نورعباس نے کہا کہ خواتین کے مقابلے میں مردوں کے لیے زیادہ آسانیاں ہیں، عام طورپرخواتین سے زیادہ سوالات کیےجاتے ہیں۔

انہوں نے ماضی میں بنائی گئی اپنی ایک پینٹنگ کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ چاہے معاشرہ ہو یا گھر خواتین سے زیادہ سوالات کیے جاتے ہیں اور ان کے کردار پر شک کیا جاتا ہے، خواتین کی ہر بات، بیان یہاں تک کہ سوچ کو بھی مختلف زاویے سے پرکھا اور دیکھا جاتا ہے لیکن مردوں سے اتنے سوال نہیں پوچھے جاتے۔

شوبز انڈسٹری میں پیش آنے والی صنفی تفریق کے حوالے سے بات کرتے ہوئے اداکارہ نے کہا کہ انڈسٹری میں بھی اداکاروں اور اداکاراؤں کے ساتھ مختلف رویے رکھے جاتے ہیں، اگر کوئی اداکار سیٹ پر دیر سے آئے تو اسے کچھ نہیں کہا جاتا بلکہ اگر اداکارہ تھوڑی دیر سے آئے تو اس کی فوراً شکایت لگا دی جاتی ہے اور اس کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ ان کے تو بہت نخرے ہیں۔

زارا نور عباس نے کہا کہ میں ایسے رویے کی عادی ہوچکی ہوں، انڈسٹری میں اخلاقیات کی بہت کمی ہے لیکن مجھے لگتا ہے کہ انڈسٹری میں تمام اداکاروں اور ٹیم کے مابین پروفیشنلزم ہونا چاہیے لیکن ہمیں شوٹنگ کے دوران ایسا ماحول نہیں ملتا، میں ہالی ووڈ کے بارے میں بھی بات نہیں کروں گی کیوں کہ ہم بالی ووڈ یا ٹالی ووڈ سے بھی بہت پیچھے ہیں، ہمیں بنیادی سہولتیں تک میسر نہیں ہوتیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.