پاکستانفیچرڈ پوسٹ

عاصم سلیم باجوہ کتنی تنخواہ لیتے ہیں،کون کون سی سہولتیں دی گئیں؟

عاصم سلیم باجوہ کتنی تنخواہ لیتے ہیں،کون کون سی سہولتیں دی گئیں؟، چئیرمین سی پیک اتھارٹی کے متعلق آنکھیں کھول دینے والے انکشافات

عاصم سلیم باجوہ کتنی تنخواہ لیتے ہیں،کون کون سی سہولتیں دی گئیں؟، سینیئرصحافی وکالم نگارسہیل وڑائچ نے اپنے ایک کالم میں لکھا تھا کہ سابق ڈی جی آئی ایس پی آر لیفٹیننٹ جنرل(ر)عاصم سلیم باجوہ نے وزیراعظم کے مشیر اطلاعات کا عہدہ  بنا کسی تنخواہ یا اضافی مراعات کے قبول کیا ہے اور انہوں نے واضح کیا ہے کہ وہ سیاست میں بالکل دلچسپی نہیں رکھتے۔ بی بی سی کیلیے لکھے اپنے کالم میں سہیل وڑائچ کا کہنا تھا کہ رحیم یار خان کے جاٹ کاشت کار گھرانے میں پیدا ہونے والے عاصم سلیم باجوہ کی زندگی کا بیشتر حصہ تو فن سپہ گری میں گزر گیا۔ فوجی ملازمت سے ریٹائرڈ ہوئے تو سٹریٹیجک انتظامی عہدے سی پیک کے چیئرمین ہوگئے، اب وہ وزیراعظم کے مشیر برائے اطلاعات بھی ہوچکے یوں زندگی میں پہلی باروہ خالص سیاسی عہدے پر کام کررہے ہیں ۔ فوج اورسیاست کےنظام کارمیں اس قدرفرق اورتضاد ہے کہ فوج سے سیاست کے میدان میں آنے والے ذہین ترین جنرل اعظم خان، جنرل اسلم بیگ اورجنرل حمید گل بھی کامیابی حاصل نہ کرسکے۔

دوسری جانب ذرائع کا کہنا ہے کہ چئیرمیں سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ کی تنخواہیں کل ملا کر 40 لاکھ سے زائد بنتی ہیں جبکہ دیگر مراعات اس کے علاوہ ہیں۔ سہیل وڑائچ کے مطابق اسی اندیشے کے پیش نظر میں نے جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ سے سوال کیا کہ کیا سیاسی عہدہ لینے کا مطلب سیاست میں آنا سمجھا جائے تو انھوں نے واضح طور پر کہا کہ وہ سیاست میں دلچسپی نہیں رکھتے۔ انھوں نے یہ عہدہ بغیر تنخواہ اور مراعات کے اعزازی طور پر لیا ہے اور باوجود پیشکش کے انھوں نے مشیر کے عہدے کو وزیر کے برابر کا نوٹیفیکیشن بھی نہیں کروایا۔

Back to top button