پاکستانفیچرڈ پوسٹ

نوازشریف کوسعودی عرب بھجوانے والے کردارسامنے آگئے

نوازشریف کوسعودی عرب بھجوانے والے کردارسامنے آگئے، شیخ رشید احمد نے اپنی کتاب میں حقائق کھول کررکھ دئے

وزیرریلوے شیخ رشید نےاپنی کتاب میں دعویٰ کیا ہےکہ مریم نوازنےنوازشریف کوملک سےنکلانے میں بہت کلیدی کردارتھا کیونکہ انہوں نے سعودی شاہی خاندان کی بچیوں سے اپنی تعلق داری بنائی ہوئی تھی۔اسی متعلق گفتگوکرتے ہوئے وزیرریلوے شیخ رشید کا کہنا ہے کہ مشرف دور میں نواز شریف کے باہر جانے میں مریم نوازنے اہم کردار ادا کیا،انہوں نے کہا کہ اس وقت نوازشریف کوباہرلےجانےمیں مریم نواز کا اہم ہاتھ تھا اور واپس لانے میں شہبازشریف نےکردارادا کیا۔ شیخ رشید نے مزید کہاکہ مریم نوازنےسعودی عرب کے شاہی خاندان اور ان کی بچیوں کے ساتھ تعلق داری بنائی ہوئی تھی،تاہم نواز شریف کو واپس لانے میں شہبازشریف نے کردارادا کیا۔  کیونکہ شہباز شریف جانے کے لیے تیارنہیں تھا،انہوں نے جہازکولیٹ کروایا لیکن باپ کےکہنے پر وہ مشکل سے راضی ہوئے۔ شہبازشریف اس جہازپر چڑھنے کےلیے تیارنہیں تھا جوسعودی عرب جا رہا تھا۔

پرویزمشرف نے کہا تھا کہ اگرشہباز شریف ساتھ نہ گیا تو یہ معاہدہ ختم ہو جائے گا۔اس معافی نامے میں تمام مردوں کے دستخط ہیں جس پر لکھا تھا کہ ہم دس سال تک واپس نہیں آئیں گے۔واضح رہے کہ شیخ رشید کی352 صفحات کی کتاب میں 31 تصاویر اور 12 ابواب شامل ہیں۔سابق وزیراعظم نواز شریف کے دور حکومت میں دھرنوں کے حوالے سے وفاقی وزیر نے انکشاف کیاکہ دھرنے سے متعلق طاہر القادری اور عمران خان کے درمیان لندن میں معاملات طے پائے تھے، آزادی مارچ پر گوجرانوالہ میں حملہ ہوا تو عمران خان نے کنٹینر سے چوہدری نثار کو فون کیا، عمران خان اپنی تحریک طاہرالقادری کی تحریک سے الگ اور منفرد رکھنا چاہتے تھے۔

انہوں نے کہاکہ 34ارکان تحریک انصاف نے اسمبلی سے استعفیٰ دیا تو سیاسی زلزلہ آگیا، قومی اسمبلی اور ٹی وی اسٹیشن جانے کا فیصلہ کنٹینر میں ہوا، جس سے جاوید ہاشمی متفق نہیں تھے تاہم عمران خان ہر حالت میں نواز حکومت گرانا چاہتے تھے، عمران خان نے انگلی اٹھانے کا اشارہ کیا تو میں نے آئندہ ایسے اشارے نہ کرنے کا مشورہ دیا۔شیخ رشید نے لکھا کہ عمران خان جو فیصلہ کر لیں پھر وہ نتائج کی پرواہ کیے بغیر پیچھے نہیں ہٹتے، دھرنے میں عمران خان نے چینی سفیر کو پیغام بھیجا کہ چینی صدر پاکستان آئیں تو وہ راستہ کلیئر دیں گے۔

 

Back to top button