صحت

گرم پانی پینے کے کیا فوائد حاصل ہوں گے؟

گرم پانی کا استعمال سردیوں کےموسم میں مجموعی جسمانی صحت کےلیےدوا کی حیثیت رکھتا ہے توایسا کہنا غلط نہ ہوگا۔

گرم پانی پینے کے کیا فوائد حاصل ہوں گے؟ گرم پانی پینا بےشمارفوائد کا حامل ہے،اگرکہا جائےکہ گرم پانی کا استعمال سردیوں کےموسم میں مجموعی جسمانی صحت کےلیےدوا کی حیثیت رکھتا ہے توایسا کہنا غلط نہ ہوگا۔ طبی ماہرین کےمطابق انسانی جسم کا 60 فیصد سےزائد حصہ پانی پرمشتمل ہےجس میں دماغ اور دل کا 73 فیصد حصہ پانی ہے،انسانی جسم کےلیےپانی کی مناسب مقدارنہایت ضروری ہے،ماہرین کی جانب سےہربیماری میں زیادہ سےزیادہ پانی کا استعمال تجویزکیا جاتا ہے۔

ماہرین کےمطابق ہربالغ انسان کودن میں کم ازکم 8 گلاس پانی ضرورپینا چاہیےاوراگرسادہ پانی کےبجائےنیم گرم پانی  پی لیا جائےتواس کے صحت پرسوفیصد مثبت نتائج حاصل ہوتےہیں۔ طبی ماہرین کےمطابق سردیوں میں پیاس نہ لگنےکےسبب پانی کا استعمال کم کردیا جاتا ہے جس کےنتیجےمیں ہاضمےاورجسمانی دیگراعضاء سےمتعلق شکایت بڑھ جاتی ہے،سردیوں میں بھی پانی کی مقدارکم ازکم 8 گلاس کے درمیان ہونی چاہیےاوراگریہ مقدارنیم گرم پانی پرمشتمل ہوتوجسم پرحیرت انگیز فوائد خود بہ خود واضح محسوس کیےجا سکتےہیں۔

طبی ماہرین کےمطابق سردیوں کےموسم میں وائرل انفیکشن،موسمی بیماریوں خصوصاً نزلہ زکام بخارسےبچنےکےلیےاگرنیم گرم سےتھوڑا سا زیادہ گرم (اتنا گرم کےزبان نہ جلےاورپینےمیں آسانی ہو) کرکےاستعمال کیا جائےتواس کےصحت پرفوائد سوگنا بڑھ جاتےہیں۔

جاپانی طبی ماہرین کےمطابق گرم پانی کےنتیجےمیں شدید سردرد (مائیگرین)،ہائی بلڈ پریشر،خون کی کمی،جوڑوں کا درد،دل کی دھڑکن کا ایک دم تیزیا آہستہ ہوجانا،مرگی کاعلاج،ضدی پیٹ کی چربی،کولیسٹرول،شدید کھانسی،بےچینی،دمہ،کالی کھانسی،رگوں میں چربی جم جانے کےسبب خون کےبہاؤ میں رکاوٹ،معدے کی تیزابیت،بھوک کم لگنا اورہربیماری جوآنکھ کان گلےسےمتعلق ہواُس کا علاج گرم پانی سےکیا جا سکتا ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.