انٹرنیشنل

آرمینیا نے آذر بائیجان کے ساتھ جاری جھڑپوں کو بندکرنے پر رضا مندی ظاہر کردی

نگورنو کاراباخ کے خلاف جارحیت جاری رہی تو اس کا بھر پور جواب دیا جائے گا: وزارت خارجہ

آرمینیا نے نگورنو کاراباخ کے متنازع علاقے پر آذربائیجان کے ساتھ جاری جھڑپوں میں سیز فائر پر رضا مندی ظاہر کردی۔

انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق آرمینیا کی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں نگورنو کاراباخ میں سیز فائر کرنے پر رضا مندی ظاہر کی گئی ہے۔ وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ آرمینیا آرگنائزیشن فار سکیورٹی اینڈ کوپریشن اِن یورپ (او ایس سی ای)کے ساتھ کاراباخ پر دوبارہ سے سیز فائر کرنے پر تیار ہے۔

وزارت خارجہ کے بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ نگورنو کاراباخ کے خلاف جارحیت جاری رہی تو اس کا بھر پور جواب دیا جائے گا۔ انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق امریکا، فرانس، روس، آرمینیا اور آذربائیجان کے درمیان کاراباخ کے معاملے پر تنازع کے حل کیلئے 1992 میں بننے والی او ایس سی ای کے شریک سربراہ ہیں، ان ممالک نے فوری طور پر آرمینیا اور آذربائیجان سے سیز فائر کا مطالبہ کیا تھا۔

Back to top button