انٹرنیشنلفیچرڈ پوسٹ

چین میں تیار کی جانے والی کورونا ویکسین متاثرین کے لئے فائدہ مند ہے یا نقصان دہ؟ پاکستانیوں کے رونگٹے کھڑے کر دینے والی خبر نے سب کو چونکا کر رکھ دیا

چین میں تیار کی جانے والی کورونا وائرس کی ویکسین کی افادیت کم ہونے کا انکشاف سامنے آنے کے بعد چینی عہدیدار بھی میدان میں آگئے

چین میں تیار کی جانے والی کورونا ویکسین متاثرین کے لئے فائدہ مند ہے یا نقصان دہ؟ پاکستانیوں کے رونگٹے کھڑے کر دینے والی خبر نے سب کو چونکا کر رکھ دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چین کے اعلی عہدیدار نے کورونا وائرس کے خلاف ملک میں تیار کی جانے والی ویکسین کی کم افادیت کا اعتراف کر لیا۔ اس حوالے سے چینی مرکز کے سربراہ گا فو نے بیجنگ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ چین کورونا ویکسین کی افادیت بہت زیادہ حوصلہ افزا نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ چین کوڈ 19 ویکسین کو زیادہ مؤثر بنانے کے لیے اس میں دوسری ویکسینز ملانے کے طریقہ کارغور کررہا ہے۔ چین کی موجودہ ویکسینز کی عالمی وبا کے خلاف تحفظ کی شرح اور افادیت بہت زیادہ نہیں ہے۔ چین ان کورونا ویکسینز کی افادیت کو بڑھانے کے لیے اس میں دوسری ویکسین ملانے پر غور کررہا ہے۔

انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق چین نے عوامی سطح پر استعمال کے لیے چار مختلف ویکسینز کی منظوری دی۔ تاہم بیرون ممالک ان ویکسینز پر ہونے والی آزمائشوں میں ان کو 50 فیصد تک مؤثر قرار دیا جا چکا ہے۔ چین میں ایک کروڑ سے زائد افراد کو کورونا ویکسین کی کم از کم ای ڈوز لگائی جا چکی ہے۔ چینی عہدیدار کے اس بیان پر اظہار تشویش کیا گیا جس کے بعد گا فو نے کہا کہ ان کے بیان کی غلط تشریح کی گئی ہے۔ انہوں نے اس بات پر اصرار کیا کہ چین کی کورونا ویکسینز بہت حد تک مؤثرہیں۔ ویکسین کے عمل کو ”بہتر بنانے” کے اقدامات کے طور پر خوراک کی تعداد اور ٹیکہ لگنے کے بعد ٹائم کو لمبا کیا جانا چاہیے۔ اس کو زیادہ مؤثربنانے کے لیے کوڈ 19 ویکسین میں دوسری ویکسین کو شامل کیا جانا چاہیے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.