انٹرنیشنلفیچرڈ پوسٹ

موت کی جھوٹی خبر اڑانے کی سزا ایک سال بعد مل گئی، میاں بیوی کی حقیقت سب کے سامنے آنے کے بعد یورپی ممالک سمیت پوری دنیا میں سنسنی پھیل گئی ہے

مصر سے تعلق رکھنے والی مشہور یوٹیوب بلاگر ام ضیاد اپنی موت کے حوالے سے کیے گے جھوٹے ڈرامے کے ٹھیک ایک سال قبل انتقال کر گئی

موت کی جھوٹی خبر اڑانے کی سزا ایک سال بعد مل گئی، میاں بیوی کی حقیقت سب کے سامنے آنے کے بعد یورپی ممالک سمیت پوری دنیا میں سنسنی پھیل گئی ہے

تفصیلات کے مطابق مصر میں پیش آئے ایک واقعے نے انٹرنیٹ بلاگنگ سے وابستہ لوگوں کو ناصرف افسردہ کر دیا، بلکہ محض شہرت کے حصول کیلئے بھیانک جھوٹ بولنے والوں کیلئے عبرت کا باعث بھی بن گیا۔ بتایا گیا ہے کہ مصر سے تعلق رکھنے والی مشہور یوٹیوب بلاگر ام زیاد اپنی موت کے حوالے سے کیے گے جھوٹے ڈرامے کے ٹھیک ایک سال قبل حقیقت میں انتقال کر گئی۔ ام ضیاد نے 9 اپریل 2020 کو اپنی موت کا جھوٹا ڈرامہ رچا کر ویڈیو یوٹیوب پر ڈالی تھی۔ ویڈیو کے حوالے سے ام زیاد نے موقف اختیار کیا کہ وہ دیکھنا چاہتی تھی کہ اس کی موت پر شوہر اور بچوں کا کیا ردعمل ہوگا۔ اس ویڈیو کے حوالے سے ام زیاد کو کافی تنقید کا بھی سامنا کرنا پڑا تھا۔

جبکہ اب معلوم ہوا ہے کہ اس واقعے کے ٹھیک ایک سال بعد، یعنی 9 اپریل 2021 کو ام زیاد حقیقت میں انتقال کر گئی۔ ام زیاد کے بھائی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ اس کی بہن کمرے میں گیس بھر جانے کی وجہ سے انتقال کر گئی۔ کچھ روز قبل بھی ام زیاد نے اپنی ایک ویڈیو میں بتایا تھا کہ کمرے مین گیس بھر جانے اور آکسیجن کی کمی کی وجہ سے اس کی طبیعت خراب ہے، اسے سانس لینے میں کافی دشواری ہے۔ ام زیاد کے انتقال پر سوشل میڈیا صارفین نے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے ان کی مغفرت کیلئے دعا کی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.