انٹرنیشنل

انڈیا میں پھیلے کورونا وائرس نے تباہی مچا دی‘ ہر طرف لاشیں ہی لاشیں، انسانیت کو ٹرپا دینے والے اعدادو شمار سامنے آنے کے بعد پوری دنیا میں خوف و ہراس پھیل گیا

انڈیا کی سب سے زیادہ آبادی والی ریاست اتر پردیش میں کورونا وائرس کے متاثرین میں مسلسل اضافے کی خبریں آ رہی ہیں

انڈیا میں پھیلے کورونا وائرس نے تباہی مچا دی‘ ہر طرف لاشیں ہی لاشیں، انسانیت کو ٹرپا دینے والے اعدادو شمار سامنے آنے کے بعد پوری دنیا میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے۔

انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق ان دنوں انڈیا میں کووڈ 19 کی دوسری خطرناک لہر اپنے عروج پر ہے۔ انڈیا کی سب سے زیادہ آبادی والی ریاست اتر پردیش میں کورونا وائرس کے متاثرین میں مسلسل اضافے کی خبریں آ رہی ہیں۔ انتظامیہ کی صورتحال کو قابو کرنے کے دعوں کے باوجود لوگوں نے بی بی سی کے ساتھ اپنی مشکلات کا ذکر کیا ہے۔ کنول جیت سنگھ کے 58 برس کے والد نرنجن پال سنگھ کی ایک ہسپتال سے دوسرے ہسپتال جاتے ہوئے ایمبولینس میں ہی موت واقع ہو گئی تھی۔ بستروں کی کمی کی وجہ سے انھیں چار ہسپتالوں نے داخل کرنے سے انکار کر دیا تھا۔ کانپور میں اپنے گھر سے انھوں نے فون پر بتایا یہ میرے لیے بہت ہی افسوسناک دن تھا۔ مجھے یقین ہے کہ اگر انھیں بروقت علاج مل جاتا تو وہ بچ جاتے لیکن پولیس، صحت کی انتظامیہ یا حکومت نے ہماری مدد نہیں کی۔

گذشتہ سال اس وبا کے پھیلنے کے بعد سے کل آٹھ لاکھ 51 ہزار 620 افراد کے اس وائرس سے متاثر ہونے اور نو ہزار 830 اموات کے ساتھ اترپردیش کی حالت پہلی لہر میں زیادہ خراب نہیں تھی لیکن دوسری لہر نے اس ریاست کو بے بسی کی صورتحال سے دوچار کر دیا ہے۔ حکام کا اب بھی کہنا ہے کہ صورتحال قابو میں ہے لیکن ریاستی دارالحکومت لکھن، وارانسی، کانپور اور الہ آباد جیسے بڑے شہروں میں کورونا تشخیص کے مراکز پر ہجوم، ہسپتالوں سے واپس کیے جانے والے مریضوں میں اضافے اور مرگھٹ پر 24 گھنٹے جلتی لاشوں نے قومی سطح پر شہ سرخیاں بنائی ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.