انٹرنیشنل

والدہ کو قتل کرکے سگے بیٹے پر گوشت کھانے کا الزام، مقدمہ درج

انھیں خاتون کے جسم کے ٹکڑے گھر میں بکھرے ہوئے ملے جن میں کچھ کو پلاسٹک کے ڈبوں میں رکھا گیا تھا

والدہ کو قتل کرکے سگے بیٹے پر گوشت کھانے کا الزام، مقدمہ درج‘ سپین میں ایک شخص پر اپنی ہی والدہ کو قتل کرنے ان کی میت کے ٹکڑے کرنے اور انھیں کھانے کے الزام میں مقدمہ چلایا جا رہا ہے۔

انٹرنیشنل میڈیارپورٹس کے مطابق البرٹو سانچیز گومیز کو سنہ 2019 میں اس وقت گرفتار کیا گیا جب پولیس ان کی 66 سالہ والدہ کے گھر گئی۔ پولیس والدہ کی ایک دوست کی جانب سے خدشات کے اظہار کے بعد یہاں پہنچی تھی۔ پولیس کا کہنا تھا کہ انھیں خاتون کے جسم کے ٹکڑے گھر میں بکھرے ہوئے ملے جن میں کچھ کو پلاسٹک کے ڈبوں میں رکھا گیا تھا تاہم ملزم نے عدالت میں دعوی کیا کہ انھیں اپنی والدہ کے جسم کے ٹکڑے کر کے کھانا یاد نہیں ہے۔پولیس کے مطابق مبینہ طور پر البرٹو گرفتاری سے قبل ایک پرسنیلٹی ڈس آرڈر کا شکار تھے اور انھیں منشیات کی لت بھی تھی۔عدالتی کارروائی میں بتایا گیا ہے کہ پولیس جب فروری 2019 میں میڈرڈ شہر کے مشرقی حصے میں اِن خاتون کے گھر گئی تو انھیں کیسے غمناک اور افسوسناک مناظر دیکھنے کو ملے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.