انٹرنیشنلفیچرڈ پوسٹ

متحدہ عرب امارات اورسعودی عرب کےدرمیان نیا محاذ کھل گیا

تیل کی پیداوارکا معاملہ،متحدہ عرب امارات اورسعودی عرب کےدرمیان نیا محاذ کھل گیا،کشیدگی کہاں تک جا پہنچی؟دنیا کوہلا کررکھ دیا

تیل کی پیداوارکا معاملہ،متحدہ عرب امارات اورسعودی عرب کےدرمیان نیا محاذ کھل گیا،کشیدگی کہاں تک جا پہنچی؟دنیا کوہلا کررکھ دیا،رپورٹس کے مطابق دنیا میں تیل پیدا کرنے والے سب سے بڑے ممالک متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے درمیان تیل کی پیداوار کے کوٹے پر کشیدگی کے سبب ان کے درمیان مذاکرات میں رکاوٹ پیدا ہو گئی ہے۔

اس کا اثر تیل کی تمام بڑی منڈیوں پر پڑا جو مذاکرات رُکنے کی وجہ سے پریشان ہیں اور اس کی وجہ سے تیل کی قیمتیں چھ برسوں کی اپنی بلند ترین سطح پر پہنچ گئیں۔ پٹرولیم ایکسپورٹ کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک پلس کو جس میں روس جیسے ممالک بھی شامل ہیں اپنے مذاکرات غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کرنا پڑے جس کے بعد اس گروپ کے اتحاد کے بارے میں خدشات پیدا ہو گئے ہیں۔

یہ مسئلہ گزشتہ ہفتے اس وقت شروع ہوا جب متحدہ عرب امارات نے اوپیک پلس کے رہنماؤں سعودی عرب اور روس کی اس تجویز کو مسترد کر دیا جس میں دونوں ممالک نے کہا تھا کہ تیل کی پیداوار سے متعلق پابندی کو مزید آٹھ ماہ تک برقرار رکھا جانا چاہیے۔

لیکن متحدہ عرب امارات تیل کی پیداوار کی اپنی موجودہ ‘بیس لائن’ پر دوبارہ بات چیت کرنا چاہتا ہے۔ متحدہ عرب امارات نے کہا ہے کہ اسے تھوڑا سا زیادہ تیل پیدا کرنے کی آزادی دی جانی چاہیے۔ سعودی عرب اور روس اس کے خلاف تھے۔

مذاکرات نے اس وقت ایک عجیب موڑ لیا جب متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے وزرائے توانائی جو ایک دوسرے کے قریب سمجھے جاتے ہیں نے اس معاملے پر اختلافات کے بارے میں کھل کر باتیں کرنا شروع کر دیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.