انٹرنیشنل

سدھو کو قتل کے مجرموں کے ساتھ رکھا جائے گا

کانگریس رہنما اورسابق بھارتی کرکٹرکومیڈیکل چیک اپ کے بعد گزشتہ روز پٹیالہ جیل بھیج دیا گیا

سال 1988 کے روڈ ریج کیس میں گرفتارہونے والے کانگریس رہنما اورسابق بھارتی کرکٹرنوجوت سنگھ سدھوکومیڈیکل چیک اپ کے بعد گزشتہ روز پٹیالہ جیل بھیج دیا گیا۔ پنجاب کانگریس کے سابق صدرنوجوت سنگھ سدھونے گزشتہ روزپٹیالہ جیل میں پہلی رات گُزاری جہاں اب وہ قیدی نمبر 241383 بن گئے ہیں۔ جیل کے اندرجانےکےبعد، سدھوکو ایک قیدی نمبرالاٹ کیا گیا اوربیرک نمبر 7 میں منتقل کردیا گیا، جہاں وہ قتل کی سزا کاٹنے والے 8 قیدیوں کےساتھ سیل شیئرکریں گے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ایک ذرائع نے بتایا کہ بیرک میں سدھوسیمنٹ سےبنےبسترپرسوئیں گے۔ رپورٹ کے مطابق سدھوکوجیل میں گزشتہ شام 7 بجکر 15 منٹ دال اورروٹی دی گئی۔ تاہم، انہوں نےخراب صحت کا حوالہ دیتےہوئے وہ کھانےسے انکارکیا اورصرف سلاد اورکچھ پھل کھائے۔ دوسری جانب سدھوکے میڈیا ایڈوائزرنے کہا کہ ’سدھوکوگندم سے الرجی ہے اورجگر کا مسئلہ ہے اس لیے انہوں نے خصوصی خوراک کا کہا ہے، وہ کافی عرصے سے روٹی نہیں کھا رہے اور اُنہوں نے جیل منتقلی سے قبل ہونے والے طبی معائنے کے دوران بھی اس کے بارے میں معلومات دی تھیں۔‘

بھارتی میڈیا کےمطابق نوجوت سنگھ سدھوکوسفید کُرتا پاجامےکےچارسیٹ،ایک کرسی میز،ایک الماری،دوپگڑیاں،ایک کمبل،ایک بیڈ، ایک بنیان،دو تولیےاورایک مچھردانی فراہم کی گئی ہےاورساتھ ہی کاپی،ایک قلم،جوتوں کا ایک جوڑا،دوبیڈ کوراوردوتکیےکےکوربھی دیے گئے ہیں۔ واضح رہےکہ نوجوت سنگھ سدھوکو 1988 کےروڈ ریج کیس میں ایک سال قید کی سزا سنائی گئی۔ روڈ ریج مقدمےمیں یہ الزام شامل ہےکہ 27 دسمبر 1988 کوسدھونےگرنام سنگھ کےسرپرمکّامارا تھا جس سےان کی موت ہوئی تھی۔

اس سے قبل بھارتی سپریم کورٹ نے سدھو پر 1000روپے جرمانہ عائد کرکے انہیں رہا کردیا تھا، تاہم اس حوالے سے ہلاک ہونے والے شخص کے خاندان نے نظرثانی درخواست دائر کی تھی، جس میں ان کو سزا سنائی گئی۔ سدھو نے بھارتی سپریم کورٹ کے پہلے کے حکم کا حوالہ دیتے ہوئے اپنے خلاف روڈ ریج کیس کا دائرہ بڑھانے کی درخواست کی مخالفت کی ہے جس میں کہا گیا تھا کہ اس بات کا کوئی ثبوت نہیں ہے کہ گرنام سنگھ کی موت ضرب لگنے سے ہوئی تھی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.