انٹرنیشنل

بھارتی مسلمانوں کےگھرمسمار؛اسد الدین اویسی کا شدید ردعمل

اسد الدین اویسی نےسوالیہ اندازمیں کہا کہ ’یوپی کےوزیراعلیٰ الہٰ آباد ہائی کورٹ کےچیف جسٹس بن گئےہیں

آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کےسربراہ اسد الدین اویسی نےمسلمانوں کےگھرمسمارکرنےپرشدید ردّعمل دیتےہوئےکہا کہ یوپی کےوزیراعلیٰ الہٰ آباد ہائی کورٹ کےچیف جسٹس بننےکی کوشش کررہےہیں۔ بھارتی میڈیا رپورٹ کےمطابق اسد الدین اویسی نےگزشتہ روزاترپردیش کے وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ پرمسلمانوں کےگھروں کومسمارکرنےپرتنقید کرتےہوئےکہا کہ وہ الہٰ آباد ہائی کورٹ کےچیف جسٹس کی طرح برتاؤ کررہےہیں۔

اسد الدین اویسی نےسوالیہ اندازمیں کہا کہ ’یوپی کےوزیراعلیٰ الہٰ آباد ہائی کورٹ کےچیف جسٹس بن گئےہیں،وہ جس کومرضی مجرم ٹھہرائیں گےاوران کےمکانات کوگرائیں گے؟ واضح رہےکہ بھارت میں گستاخانہ بیانات کےخلاف احتجاج کا سلسلہ نہیں رُکا تومودی سرکار نےظلم کی انتہا کردی اوراحتجاج کرنےوالےمسلمانوں کےگھرگِرا دیئے۔ گزشتہ روزبلڈوزرکی مدد سےپولیس کی نگرانی میں اُن مسلمانوں کے گھرمسمارکیےگئےجنہوں نےگستاخانہ بیانات کےخلاف احتجاج کیا۔

 بھارتی میڈیا رپورٹس کےمطابق مسلم ایکٹیوسٹ جاوید محمد کوالہٰ آباد میں مظاہروں کا ماسٹرمائنڈ قراردیتےہوئےاہلخانہ سمیت گرفتارکرکے اُن کا گھرمسمارکردیا۔ مسلم ایکٹیوسٹ جاوید محمد کی بیٹی نےبتایا کہ اُن کےاہلخانہ کوگزشتہ شب گرفتارکرکےنامعلوم جگہ منتقل کردیا گیا۔ دوسری جانب اترپردیش کےہندوانتہا پسند وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نےکہا ہےکہ مظاہرین کےخلاف ایسی کارروائی کی جائےکہ سب کےلیے مثال بن جائے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.