انٹرنیشنل

حریت رہنماء یاسین ملک نے آخر کار جاری بھوک ہڑتال ختم کر دی

یاسین ملک نے غیرمعینہ مدت کیلئے بھوک ہڑتال کا اعلان اس وقت کیا جب انہیں ربیعہ قتل کیس میں عدالت میں پیش ہونے کی اجازت نہیں دی گئی

حریت رہنما یاسین ملک نے نئی دہلی کی تہاڑ جیل میں 12 دن سے جاری بھوک ہڑتال ختم کر دی’ طبیعت بگڑ جانے پر ان کو مقامی اسپتال میں منتقل کر دیا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق انٹرنیشنل میڈیا کا کہنا ہے کہ 56 سالہ یاسین ملک نے گزشتہ ماہ کے آخر میں غیرمعینہ مدت کیلئے بھوک ہڑتال کا اعلان اس وقت کیا جب انہیں ربیعہ قتل کیس میں عدالت میں پیش ہونے کی اجازت نہیں دی گئی۔ کئی روز سے بھوک ہڑتال پر رہنے کی وجہ سے گزشتہ دنوں یاسین ملک کے جسم میں پانی کی کمی ہوگئی تھی، انہیں انجیکشن کے ذریعے فلوڈز دیے جارہے تھے لیکن وہ ان کے لیے کافی نہیں تھے۔ بعد ازاں یاسین ملک کی طبیعت بگڑ گئی تھی جس کے بعد انہیں اسپتال منتقل کردیا گیا تھا تاہم آج یاسین ملک کی اہلیہ مشعال نے سوشل میڈیا پر بیان جاری کرتے ہوئے اعلان کیا کہ’مجھے خوشی ہے کہ میرے شوہر عظیم کشمیری حریت رہنما یاسین ملک نے 12 دن کے بعد تہاڑ جیل میں بھوک ہڑتال ختم کردی ہے’۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.