انٹرنیشنل

مصر میں افسوسناک واقعہ، بیٹے کو سکول کی طرف سے کتابیں نہ ملنے پر والد نے خود کو آگ لگا لی

ایک شخص نے اسکول کی پرنسپل کی جانب سے ناروا سلوک پر پرائمری اسکول کے اندر اپنے کپڑوں پر پیٹرول چھڑک کر آگ لگالی

مصر میں ایک افسوس ناک واقعہ پیش آیا جہاں والد نے اپنے بیٹے کو سکول کی طرف سے نصابی کتابیں نہ ملنے پر احتجاج کرتے ہوئے خود کو آگ لگا لی۔

انٹرنیشنل میڈیا رپورٹس کے مطابق ہفتے کے روز ایک شخص نے اسکول کی پرنسپل کی جانب سے ناروا سلوک پر پرائمری اسکول کے اندر اپنے کپڑوں پر پیٹرول چھڑک کر آگ لگالی۔ حکام نے بتایا کہ اسکول نے اس شخص کے بیٹے کو اس وقت تک نصابی کتابیں دینے سے انکار کیا تھا جب تک کہ انہیں ادائیگی نہیں کی جاتی۔ واقعے کے بعد اسکول میں موجود متعدد عملے نے آگ بجھائی اور اس شخص کو فورا اسپتال منتقل کرکے اس کی جان بچالی۔ آگ کے باعث معمولی جھلسنے کی وجہ سے وہ اب بھی زیر علاج ہے۔ میڈیا کے مطابق اس شخص کی بیوی کا کہنا ہے کہ شوہر کی خود سوزی کی وجہ اسکول پرنسپل کی طرف سے اس کے ساتھ بدتمیزی تھی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ شوہر کو اسکول میں سکیورٹی عملے نے مارا پیٹا بھی تھا۔ اطلاعات کے مطابق واقعہ کے بعد اسکول کی پرنسپل کو معطل کردیا گیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.