پاکستان

رجسٹرڈ افغان باشندوں کو مزید کتنا عرصہ تک رہنے کی اجازت ہوگی؟ امریکا اور پاکستان میں ڈیڈ لائن پر اتفاق

جن افغان شہریوں کے پاس پروف آف ریزیڈینس یعنی پی او آر کارڈز موجود ہے، انہیں ریلیف مل سکتا ہے، کیونکہ کابینہ ان کے قیام میں 6 ماہ یا ایک سال کی توسیع کا فیصلہ کریگی

اسلام آباد(کھوج نیوز) رجسٹرڈ افغان باشندوں کو مزید کتنا عرصہ تک رہنے کی اجازت ہوگی؟ اس حوالے سے امریکا اور پاکستان میں ڈیڈ لائن پر اتفاق ہوگیا ہے جو اہم خبر ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم شہباز شریف نے ہائی کمشنر برائے مہاجرین سے شکایت کی تھی کہ سقوط کابل کے بعد ان 70 ہزار افغان باشندوں میں سے، جنہوں نے امریکا اور اتحادی افواج کے لیے کام کیا تھا، صرف 9 ہزار افغان باشندوں کو 3 سالوں کے دوران کسی تیسرے ملک بھیجا جاسکا ہے۔ یہ پیش رفت اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے مہاجرین فلیپو گرانڈی کے پاکستان کے 3 روزہ دورے کے آخری مرحلے میں وزیر اعظم شہباز سے ملاقات کے بعد سامنے آئی ہے، جنہوں نے افغان مہاجرین کے پی او آر کارڈز کی بروقت توسیع پر زور دیا تھا، جو ایک اہم شناختی دستاویز ہونے کے ناطے 13 لاکھ سے زائد افغان مہاجرین کے پاس ہے۔ رپورٹ کے مطابق ایک سرکاری اہلکار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ جن افغان شہریوں کے پاس پروف آف ریزیڈینس یعنی پی او آر کارڈز موجود ہے، انہیں ریلیف مل سکتا ہے، کیونکہ کابینہ ان کے قیام میں 6 ماہ یا ایک سال کی توسیع کا فیصلہ کرے گی۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button