پاکستان

گرمی کی شدید لہر،عید کے روز درجہ حرارت 2سے 4تک بڑھنے کا امکان

شدید گرمی کی لہر جاری ہے۔سبی میں محسوس کیا جانے والا درجہ حرارت 49 ڈگری تک پہنچ گیا ہے جبکہ فیصل آباد اور اسلام آباد میں 44، پشاور اور ملتان میں 43 ڈگری جیسی شدت کا احساس ہو رہا ہے

لاہور(کھوج نیوز)ملک بھر میں گرمی کی شدید لہرکے باعث لاہور میں 43 ڈگری میں 47 ڈگری جیسی گرمی محسوس ہونے لگی ہے۔فیصل آباد اور اسلام آباد میں 44، پشاور اور ملتان میں 43 ڈگری جیسی شدت کا احساس ہورہا ہے۔پاکستان کے بیشتر میدانی علاقوں میں شدید گرمی کی لہر جاری ہے۔سبی میں محسوس کیا جانے والا درجہ حرارت 49 ڈگری تک پہنچ گیا ہے جبکہ فیصل آباد اور اسلام آباد میں 44، پشاور اور ملتان میں 43 ڈگری جیسی شدت کا احساس ہو رہا ہے۔کراچی میں محسوس کیا جانے والا درجہ حرارت 38 ڈگری ہوگیا، شہر قائد میں آج 42 ڈگری جتنی شدت کی گرمی محسوس کی جا رہی ہے۔ رات گلگت بلتستان، بالائی خیبر پختونخوا اور کشمیر میں چند مقامات پر تیز ہواؤں اورگرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ظاہر کیا گیا ہے۔باقی علاقوں میں کل یعنی عید کے دن بھی موسم شدید گرم رہے گا۔ خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ عید کے دن کا درجہ حرارت 02 سے 04 ڈگری سینٹی گریڈ معمول سے زیادہ رہنے کا امکان ہے۔ ملک میں سب سے زیادہ درجہ حرارت جیکب آباد میں 48 ڈگری سینٹی ریکارڈ کیا گیا۔ہے۔

دوسرے شہروں میں درجہ حرارت سبی، نور پور تھل، ڈی جی خان، بھکر،موہن جودڑو 47، اوکاڑہ، کوٹ ادو، قصور، لیہ، جھنگ، دادو 46، لاہور،ملتان، فیصل آباد، ساہیوال، تربت، نوابشاہ44، اسلام آباد، مظفر آباد، حیدر آباد 42، پشاور 41،کراچی 36،کوئٹہ 35 اور گلگت میں 34 ڈگری سینٹی ریکارڈ کیا گیا۔ آئندہ 24 گھنٹے بھی موسم گرم اور مرطوب رہنے کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات نے بتایا کہ شہر قائد کا زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 38 ڈگری سینٹی گریڈ تک جاسکتا ہے جبکہ دن میں گرمی کی شدت 42 ڈگری سینٹی گریڈ تک محسوس کی جا سکتی ہے۔یہاں ہوا میں نمی کا تناسب 70 فیصد ہے اور سمندری ہوائیں 15سے17کلو میٹرفی گھنٹہ کی رفتار سے چل رہی ہیں۔ وادی کوئٹہ اور گردونواح میں مطلع صاف، موسم خشک رہنے کا امکان ہے۔ادھر قلات، زیارت، مستونگ، پشین، قلعہ سیف اللہ، شمالی علاقوں میں بھی موسم معتدل رہے گا جبکہ بلوچستان کے جنوبی اور وسطی علاقوں میں موسم گرم رہنے کا امکان ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ روز سبی 48 ڈگری سینٹی گریڈ کے ساتھ ملک کا گرم ترین شہر رہا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button