پاکستان

3 ارب ڈالر کی مزید فنانسنگ ، پاکستان کا پلان آئی ایم ایف کے سپرد

پہلے معاہدہ ہو گا یا مزید 3 ارب ڈالرکی ضمانتیں دینا پڑیں گی،جواب موصول نہیں ہوا' پہلے معاہدہ ہو جائے تو فنانسنگ کا انتظام آسان ہو جائے گا،حکام

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، آن لائن) پاکستان نے 3 ارب ڈالر کی مزید فنانسنگ کیلئے پلان عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کے حوالے کر دیا ہے۔ وزارت خزانہ ذرائع کے مطابق پلان کے مطابق رائز ٹو پروگرام سے 45 کروڑ، اے آئی آئی بی، کمرشل بنکوں سے 1 ارب ڈالر قرض ملے گا۔

وزارت خزانہ اور آئی ایم ایف کے درمیان فنانسنگ پر بات چیت جاری ہے۔ وزارت خزانہ حکام کا کہنا ہے پہلے معاہدہ ہو جائے تو فنانسنگ کا انتظام آسان ہو جائے گا۔ اس ضمن میں ذرائع کا کہنا ہے اب تک آئی ایم ایف کی جانب سے واضح جواب موصول نہیں ہو سکا ہے۔ پہلے معاہدہ ہو گا یا مزید 3 ارب ڈالرکی ضمانتیں دینا پڑیں گی، اس سلسلے میں پاکستان کو آئی ایم ایف جواب کا انتظار ہے۔ قرض پلان پر آئی ایم ایف کی جانب سے رسپانس ملنے کا انتظار ہے۔

جنیوا میں ڈونرز کانفرنس سے رقم حاصل کرنے کا پلان بھی آئی ایم ایف کو دیا گیا۔ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان سٹاف لیول معائدے کے لئے اس وقت سر توڑ کوششیں کی جا رہی ہیں۔ یاد رہے آئی ایم ایف نے پاکستان پر شرط عائد کی ہے کہ اسے دوست ممالک کی جانب سے فنانسنگ کے حوالے سے تحریری یقین دہانیاں فراہم کی جائیں۔ متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کی جانب سے پاکستان کو فنانسنگ پر آئی ایم ایف کو تحریری یقین دہانیاں فراہم کی جا چکی ہیں تاہم اب تک سٹاف لیول معائدے کا حصول ممکن نہیں ہو سکا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button