نگر نگر سے

اوکاڑہ، خاتون وکیل کے اغواء کا مقدمہ جھوٹ نکلا

چندہفتے پہلے خاتون وکیل ارشاد نسرین کے اغواء کامعاملہ سامنے آیا تھا

اوکاڑہ میں خاتون وکیل کےاغوا کےمعاملےکا ڈراپ سین ہوگیا، پنجاب بارکونسل کی 6 رکنی تحقیقاتی کمیٹی نےاغواء کےمقدمےکوجھوٹا اور بےبنیاد قراردے دیا، کمیٹی نےاپنی رپورٹ میں کہاہےکہ خاتون وکیل نےمقدمہ اپنےمخالفین کوپھنسانےکیلئےدرج کرایا ہے۔ اوکاڑہ میں چندہفتےپہلےخاتون وکیل ارشاد نسرین کےاغواء کامعاملہ سامنےآیا تھا، جس کا وزیراعظم اوروزیراعلیٰ پنجاب نےبھی نوٹس لےرکھا ہے۔

معاملےکی تحقیقات کےلئےپنجاب بارکونسل نے 6 رکنی کمیٹی تشکیل دی تھی ،جس نے انکوائری مکمل کرکےرپورٹ پنجاب بارکونسل کو بھجوا دی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ انکوائری کےدوران مختلف لوگوں کےبیان قلمبند کیےگئے، جن سےثابت ہوا کہ خاتون وکیل کی جانب سے اغواء کےمقدمے میں لگائےگئےالزامات جھوٹےہیں، خاتون وکیل مخالفین کےخلاف پہلےبھی مقدمات درج کرا چکی ہے۔

Back to top button