پاکستان

سائبر کرائم سے ہوشیار رہیں۔ ایف آئی اے

کوروناوائرس کے باعث لاک ڈائون کے دوران سائبرکرمنلز نے سادہ لوح اورمعصوم شہریوں کوبلیک میل کرنےکا نیا طریقہ نکال لیا ہے۔

وفاقی تحقیقاتی ادارے کےسائبر کرائم سرکل کےمطابق سائبرکرمنلزشہریوں سے رابطہ کر کے ایس ایم ایس کوڈ مانگتے ہیں جودرحقیقت واٹس ایپ ویری فیکیشن ایس ایم ایس ہوتا ہے۔سائبرکرائم سرکل کا کہنا ہے کہ کرمنلز متاثرہ شخص کےکو نٹیکٹس سےرابطہ کر کےایزی پیسہ مانگتےہیں، چند دنوں میں اس طرح کےکیس میں10فیصد اضافہ ہوا ہے۔

سائبرکرائم سرکل کے مطابق گروہ کے زیادہ تر ٹارگٹ افراد مڈل کلاس گھرانےسےتعلق رکھتےہیں، اس حوالے سے ایف آئی اے نے الرٹ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہری اپنا کسی قسم کا کوڈ کسی کونہ دیں۔

ڈائریکٹرسائبرکرائم سرکل کا کہنا ہے کہ شہری بلیک میلنگ سےبچنےکےلیےکسی نامعلوم شخص کوکوڈ نہ بتائیں۔

Tags
Back to top button
Close