پاکستان

نیب کا شہباز شریف کے گھر چھاپہ، شاہد خاقان عباسی بول اٹھے

نیب کی جانب سے چھاپے مارنے کا کوئی جواز نہیں تھا،حکومت بدنیتی سے اپوزیشن لیڈر کا پیچھا کررہی ہے

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ شہبازشریف کو آج قومی احتساب بیورو (نیب)میں پیش ہونا تھا، شہبازشریف کو نیب نے 2 جون کوبلایا پھر 28 مئی کو وارنٹ گرفتاری کیسے جاری ہوئے؟

شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ نیب کی جانب سے چھاپے مارنے کا کوئی جواز نہیں تھا،حکومت بدنیتی سے اپوزیشن لیڈر کا پیچھا کررہی ہے، شہبازشریف 70 دن ریمانڈ میں رہے ہیں،جیل کاٹی ہے،کسی کے پاس ثبوت ہیں تووہ نیب کو دے اور پھر نیب ریفرنس دائر کرے۔ سابق وزیراعظم نے کہا کہ گرفتارکرنے کا مقصد کیا ہے؟شہبازشریف کو نیب نے 2 جون کوبلایا،28 مئی کووارنٹ گرفتاری کیسے جاری ہوئے؟حکومت کا کام پریس کانفرنس کرنا نہیں کارروائی کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک میں حکومت نام کی کوئی چیز نہیں، نیب وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کے بجائے ریفرنس دائر کرے۔

Tags
Back to top button
Close