پاکستانفیچرڈ پوسٹ

یورپی ممالک کے لئے پاکستانی ایئر لائنز پروازوں پر پابندی‘ قومی ایئر لائن کو کتنا نقصان ہوا؟ تہلکہ خیز انکشاف سامنے آگیا

یورپین سیکٹرز میں پی آئی اے کا فلائٹ آپریشن بند ہونے سے پاکستان ایئر لائنز کو 28 کروڑ روپے کا نقصان ہوا

یورپی ممالک کے لئے پاکستانی ایئر لائنز پروازوں پر پابندی کے بعد قومی ایئر لائن (پی آئی اے) کو کتنا نقصان ہوا؟ اس حوالے سے تہلکہ خیز انکشاف سامنے آگیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیرِ سول ایوی ایشن غلام سرور خان کہتے ہیں کہ یورپین سیکٹرز میں پی آئی اے کا فلائٹ آپریشن بند ہونے سے 28 کروڑ روپے کا نقصان ہوا۔ یہ بات وفاقی وزیر سول ایوی ایشن غلام سرور خان نے قومی اسمبلی کے اجلاس میں جمع کرائے گئے تحریری جواب میں کہی ہے۔ وزیرِ ہوا بازی نے تحریری جواب میں کہا ہے کہ یورپی سیکٹرز پر 1 اعشاریہ 69 ارب کے بجائے 1 اعشاریہ 41 ارب روپے ریونیو حاصل ہوا۔ انہوں نے کہا ہے کہ پی آئی اے کو یہ نقصان جولائی تا اگست 2020 ہوا، جبکہ برطانیہ سیکٹر پر 52 کروڑ روپے منافع کمایا گیا ہے۔

غلام سرور خان نے اپنے تحریری جواب میں کہا ہے کہ برطانیہ اور پاکستان کے درمیان پروازیں چلانے کے لیے مالٹا کی کمپنی سے خدمات لی گئیں۔ تحریری جواب میں انہوں نے کہا ہے کہ پی آئی اے نے برطانیہ کے لیے اب تک 4 راونڈ ٹرپ چارٹر پروازیں چلائی ہیں، برطانیہ سیکٹر پر 5 اعشاریہ 31 ارب لاگت کے مقابلے میں 5 اعشاریہ 81 ارب ریونیو حاصل ہوا۔ وفاقی وزیرِ ہوا بازی کا جمع کرائے گئے تحریری جواب میں کہنا ہے کہ پی آئی اے نے کینیڈا، عرب امارات، اومان اور قطر کے لیے پروازیں شروع کر دی ہیں۔ انہوں نے قومی اسمبلی میں جمع کرائے گئے اپنے تحریری جواب میں کہا ہے کہ ملائیشیا، افغانستان اور سعودی عرب کے لیے بھی پروازوں کا دوبارہ آغاز ہو گیا ہے۔

Back to top button