پاکستانفیچرڈ پوسٹ

ملک کے تمام ادارے متنازع، قائد اعظم محمد علی جناح کا خط منظر عام پر‘ سینئر صحافی و کالم نگار سہیل وڑائچ نے حالات کی سنگینی سے پردہ اٹھا دیا

میں نے اپنے دل کی باتیں لکھ دی ہیں، آپ ان پر عمل کریں گے تو ملک ترقی کرے گا اور اگر عمل نہیں کریں گے تو حالات مزید خراب ہوں گے

سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے حالات کی سنگینی سے پردہ اٹھاتے ہوئے قائداعظم محمد علی جناح کا خط منظر عام پر لے آئے ہیں جس میں ملک کے تمام ادارے متنازع قرار دیئے گئے تھے۔

میں گزشتہ چند دنوں سے پاکستان کے سیاسی اور معاشی حالات پر بہت پریشان ہوں۔ فاطمہ جناح اور لیاقت علی خان نے بھی مجھے اپنی تشویش سے آگاہ کیا، جس کے بعد میں نے اِتمامِ حجت اور اصلاحِ احوال کی خاطر کھلا خط لکھنے کا فیصلہ کیا۔

یہاں مجھے یہ خبریں مل رہی ہیں کہ اپوزیشن جلد ہی احتجاجی تحریک چلانے والی ہے۔ پہلا جلسہ اکتوبر میں کوئٹہ میں ہوگا اور پھر ہر بڑے شہر میں جلسوں کے بعد جنوری میں لانگ مارچ اور اسلام آباد کی طرف ریلی کا بھی پروگرام ہے۔ دوسری طرف حکومت بھی مفاہمت یا ڈائیلاگ کا دروازہ کھولنے کے لئے تیار نہیں۔ ایسے میں صورتحال تصادم اور ڈیڈ لاک کی طرف جاتی ہوئی دکھائی دے رہی ہے۔ اِس طرح کے حالات میں کسی شخصیت یا ادارے کو صلح جوئیانہ کردار ادا کرنا چاہئے اور دونوں طرف سے تصادم کی طرف بڑھتے ہوئے فریقوں کو روکنا چاہئے، اِس وقت افسوس کی بات یہ ہے کہ تاحال کوئی شخصیت یا ادارہ ایسا نہیں جو غیرمتنازعہ ہو اور ملک میں افہام و تفہیم کے لئے اپنا کردار ادا کر سکے۔

دوسری طرف حکومت اپوزیشن کو نیب مقدمات میں پھنسا کر جو گرفتاریاں کر رہی ہے، وہ بند کرے۔ اپوزیشن کو اس کا جائز مقام دے کر، اسے صلاح مشورے اور قانون سازی کے عمل میں شریک کرے۔ آئندہ انتخابات کو غیرجانب دارانہ اور شفاف بنانے کے لئے تمام سیاسی جماعتیں اتفاق رائے سے لائحہ عمل طے کریں۔ نیب کے قانون کو موثر، غیرجانب دار اور شک و شبہ سے بالاتر رکھنے کیلئے دوسرے ممالک کے احتسابی اداروں کے ماڈل کو اپنایا جائے۔ حکومت اور اپوزیشن ملک سے غربت، بیروزگاری اور مہنگائی کو دور کرنے کے لئے اقدامات پر غور کریں۔
پیارے پاکستانیو!!
میں نے اپنے دل کی باتیں لکھ دی ہیں، آپ ان پر عمل کریں گے تو ملک ترقی کرے گا اور اگر عمل نہیں کریں گے تو حالات مزید خراب ہوں گے۔

Back to top button