پاکستانفیچرڈ پوسٹ

امریکا، طالبان سے مطالبات منوانے میں ناکام، اشرف غنی کی چھٹی‘ دنیا بھر میں طالبان کا کردار اہم، سلیم صافی کا ناقابل یقین تجزیہ

پاکستان نے نائن الیون کے بعد امریکہ کا ساتھ دے کر طالبان کو قربان کیا جس کی وجہ سے ان کی حکومت امریکہ کی توقع سے بھی جلد ختم ہو گئی

سینئر صحافی سلیم صافی نے ناقابل یقین تجزیہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ امریکا، طالبان سے مطالبات منوانے میں ناکام ہوگیا ہے جس کے بعد اشرف غنی کی چھٹی کا امکان پیدا ہوگیا ہے۔

سلیم صافی نے اپنے کالم میں لکھا ہے کہ سزا دونوں نے ایک دوسرے کو دی لیکن حقیقت یہ ہے کہ نائن الیون کے بعد افغانستان اور پاکستان کی حکومتوں کو ایک دوسرے کا حریف امریکہ نے بنایا اور اب امریکہ ہی کے کرتوتوں کی وجہ سے دونوں کو ایک دوسرے کے قریب آنے کا موقع مل رہا ہے۔ پاکستان نے نائن الیون کے بعد امریکہ کا ساتھ دے کر طالبان کو قربان کیا جس کی وجہ سے ان کی حکومت امریکہ کی توقع سے بھی جلد ختم ہو گئی لیکن جب افغانستان میں ہندوستان کی سرکردگی میں پاکستان کے خلاف سرگرمیاں شروع ہوئیں تو پاکستان نے بھی طالبان سے متعلق اپنی پالیسی بدل دی جس کی وجہ سے افغان حکومت ناراض ہوئی اور ایک وقت آیا کہ افغان حکومت کے اداروں نے بھی پاکستان کو جواب دینا شروع کیا۔

دونوں حکومتوں کی مخاصمت کی وجہ افغانستان میں ہندوستان کی سرگرمیاں تھیں، جسے یہ مقام امریکہ نے دلوایا تھا۔ اسی طرح گوادر کو ناکام بنانے کیلئے بلوچ عسکریت پسندوں کو افغانستان میں ٹھکانے دینا بھی بنیادی طور پر امریکہ کا ایجنڈا تھا کیونکہ گوادر کی بندرگارہ سے تکلیف افغانوں کو نہیں بلکہ امریکہ اور اس کے مغربی اتحادیوں کو تھی۔

Back to top button