پاکستانفیچرڈ پوسٹ

نوازشریف اور مریم کو ڈھیل، آصف زرداری سے ڈیل‘ ملکی سیاست میں فیصلہ کن موڑ آگیا، سینئر صحافی کا تجزیہ

زرداری کا دکھ بھی میاں نواز شریف سے کم نہیں۔ وہ سمجھتے ہیں کہ انہوں نے سینیٹ کے انتخابات میں شرمناک حد تک تعاون کیا

سینئر صحافی و کالم نگار سلیم صافی نے تجزیہ کرتے ہوئے کہا کہ میاں نوازشریف اور مریم نواز کو ڈھیل جبکہ آصف زرداری سے ڈیل کے انکشافات سامنے آنے پر ملکی سیاست میں فیصلہ کن موڑ آگیا ہے۔

سینئر صحافی کا کہنا تھا کہ میاں نواز شریف سمجھتے ہیں کہ انہیں نااہل کیا گیا، ان کی پارٹی کے لوگوں کو توڑا گیا، الیکشن میں (ان کے خیال میں)ان کے ساتھ بھرپور دھاندلی کی گئی۔ ان کو اور ان کی بیٹی کو ایسی حالت میں جیل جانے پر مجبور کردیا گیا جب ان کی اہلیہ لندن میں بسترِمرگ پر پڑی تھیں۔ ان کے خیال میں انہوں نے پھر بھی شہباز شریف کے ذریعے مفاہمت کی کوشش کی لیکن انہیں معاف نہیں کیا گیا اور الٹا شہباز شریف کو بھی اندر ڈالا گیا۔ آخری مرتبہ ان کے ساتھ دوران بیماری یہ ڈیل ہوئی کہ وہ بیٹی مریم نواز سمیت باہر چلے جائیں گے۔ یوں انہوں نے اور مریم نواز نے چپ کا روزہ رکھ کر کارکنوں کو بھی مایوس کیا اور میڈیا کے طعنے بھی برداشت کئے لیکن انکے خیال میں انکے ساتھ کئے گئے وعدے پورے نہیں ہوئے۔ اب کی بار وہ اپنے سے زیادہ اپنے بچوں اور بالخصوص مریم کے ساتھ سلوک پر دکھی اور برہم ہیں جبکہ مریم اپنے والدین کے ساتھ سلوک کی وجہ سے غصے میں ہیں۔

آصف علی زرداری کا دکھ بھی میاں نواز شریف سے کم نہیں۔ وہ سمجھتے ہیں کہ انہوں نے سینیٹ کے انتخابات میں شرمناک حد تک تعاون کیا۔ پھر چیئرمین سینیٹ کے انتخاب میں اپنی پارٹی کے امیدوار کی قربانی دے کر صادق سنجرانی کو چیئرمین بنوایا لیکن الیکشن سے قبل ان پر انکشاف ہوا کہ خدمت کا صلہ دینے کی بجائے ان کو سندھ سے فارغ کرنے کا فیصلہ ہوا ہے۔ انہوں نے شور مچایا اور رابطے کئے تو الیکشن سے چند روز قبل ان کو سندھ واپس دلوانے کا فیصلہ کیا گیا اور جواب میں انہوں نے ایک بار پھر تابعداری کی۔ انتخابات کے بعد پہلے اپوزیشن کو اسمبلیوں میں بیٹھنے پر مجبور کیا۔ پھر صدارتی الیکشن میں مولانا فضل الرحمن کو ناراض کرکے پی ٹی آئی کی گیم کو کامیاب بنایا لیکن اس کے باوجود ان کی گلو خلاصی نہیں ہوئی۔ انہیں گرفتار کیا گیا اور کیسز کو آگے بڑھایا گیا۔

Back to top button