پاکستان

شہبازشریف کی اہلیہ کواشتہاری قراردینےکےاشتہارات آویزاں

احتساب عدالت کےایڈمن جج جواد الحسن نےنصرت شہبازکےخلاف اشتہاری کارروائی کا حکم دیا تھا

منی لانڈرنگ ریفرنس میں قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرومسلم لیگ نون کےصدرشہبازشریف کی اہلیہ نصرت شہبازکواشتہاری قراردینےکے اشتہارات آویزاں کردیئےگئے۔ منی لانڈرنگ ریفرنس میں قومی احتساب بیورو (نیب) کےتفتیشی افسرنےعدالت کےباہرنصرت شہبازکا اشتہار آویزاں کردیا۔ احتساب عدالت کےایڈمن جج جواد الحسن نےنصرت شہبازکےخلاف اشتہاری کارروائی کا حکم دیا تھا۔ نوٹس میں کہا گیا ہےکہ نصرت شہبازکےناقابلِ ضمانت وارنٹِ گرفتاری جاری کیئےگئےلیکن ناقابلِ ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری ہونےکےباوجود نصرت شہباز گرفتارنہیں ہوئیں۔ نیب کےتفتیشی افسرنےعدالت کےباہر،نصرت شہبازکی رہائش گاہ اورعوامی مقامات پراشتہارآویزاں کردیا ہے۔ عدالت میں عدم پیشی کےباعث نصرت شہبازکےخلاف اشتہاری کی کارروائی کا حکم دیا گیا ہے،منی لانڈرنگ ریفرنس پرآئندہ سماعت 11 نومبرکوہوگی۔

Back to top button