پاکستان

علامہ اقبال کا یوم ولادت آج منایا جا رہا ہے

مختلف سماجی وسیاسی شخصیات نےعلامہ اقبال کےمزارپرحاضری دی اورفاتحہ خوانی کی

ڈاکٹر علامہ اقبال ؒ کا 143 واں یوم ولادت آج منایا جا رہا ہے۔ وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار،فردوس عاشق اعوان ،کورکمانڈرلاہورلیفٹینیٹ جنرل ماجد احسان سمیت مختلف سماجی وسیاسی شخصیات نےعلامہ اقبال کےمزارپرحاضری دی اورفاتحہ خوانی کی۔  مزار اقبال پر گارڈز کی تبدیلی کی تقریب ہوئی. پاک نیوی کے دستے نے فرائض سنبھال لیے۔ اس سے قبل یہ ذمی داری پاک رینجرز کے پاس تھی۔ ولادت اقبال کے حوالہ سے ملک بھرکے تمام چھوٹے بڑے شہروں میں سیمینار، مباحثوں اور اسکولوں اور کالجوں میں خصوصی تقریبات کا انعقاد ہوگا، ریڈیو، ٹی وی پرخصوصی پروگرام نشر و ٹیلی کاسٹ ہوں گے۔

صدر مملکت ڈاکٹرعارف علوی نے علامہ محمد اقبال کی سالگرہ کے موقع پر پیغام میں کہا کہ اقبال برصغیر کے مسلمانوں کے محسن تھے، جنہوں نے مسلمانوں کیلئے علیحدہ وطن کا خواب دیکھا،  وہ بڑے مفکر تھے جنہوں نے اپنی تحریروں اور شاعری کےذریعے مسلمانوں کو اتحاد کا درس دیا، انہوں نے مسلمانوں میں انقلابی روح پھونکی اور مسلمانوں کے مفادات کے تحفظ کیلئے نمایاں خدمات انجام دیں۔ وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ ‏قوم حضرت علامہ اقبال کو آج کے دن زبردست خراج عقیدت پیش کرتی ہے،  وہ ایک تاریخ سازشاعر،عظیم فلسفی اور مفکر تھے، خودی کاولولہ انگیز پیغام دے کردوسروں پر انحصار کے بجائے نوجوان نسل کواپنی دنیا آپ پیدا کرنے کاحکیمانہ درس دیا۔

Back to top button