پاکستانفیچرڈ پوسٹ

سیاست میں ٹائمنگ کی اہمیت، اپوزیشن نے اپنے جلسے اور مارچ کے لئے کونسا منصوبہ تیار کرلیا، سینئر صحافی نے حقیقت بے نقاب کر دی

ہر کوئی اپنی حب الوطنی کا ڈھنڈورا تو بہت پیٹتا ہے مگر کوئی آگے آ کر اِس کشیدہ صورتحال کا تدارک کرنے کی کوشش کیوں نہیں کرتا؟

سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے حقیقت بے نقاب کرتے ہوئے کہا کہ سیاست میں ٹائمنگ کی بڑی اہمیت ہوتی ہے اور اپوزیشن نے اپنے جلسے اور مارچ کیلئے منصوبہ تیار کرلیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے اپنے کالم میں لکھا ہے کہ سیاست میں ٹائمنگ کی بڑی اہمیت ہوتی ہے۔ اپوزیشن نے اپنے جلسے، جلوسوں اور لانگ مارچ کی ٹائمنگ سیٹ کر رکھی ہے، اب سوال یہ ہے کہ کیا حکومت نے جوابی حکمت ِعملی تیار کی ہے؟ کیا کوئی لانگ ٹرم پلان ہے یا پھرہر جلسے یا لانگ مارچ کے موقع پر صرف وقتی پالیسی بنائی جائے گی؟ ضرورت اِس امر کی ہے کہ لانگ مارچ سے پہلے پہلے اعتماد سازی کے اقدامات کرکے ملکی استحکام کو فروغ دیا جائے۔

آخر میں پوچھنا یہ تھا کہ کیا اِس ملک میں کوئی بھی ایسا شخص یا ادارہ نہیں جس کو تصادم کو روکنے کا خیال ہو؟ ہر کوئی اپنی حب الوطنی کا ڈھنڈورا تو بہت پیٹتا ہے مگر کوئی آگے آ کر اِس کشیدہ صورتحال کا تدارک کرنے کی کوشش کیوں نہیں کرتا؟ کیا کل جب تصادم ہو رہا ہوگا، ملک میں آگ لگی ہوگی، لانگ مارچ کے لئے قافلے اسلام آباد روانہ ہو رہے ہوں گے، جگہ جگہ پولیس اور حفاظتی دستے ان قافلوں کو روک رہے ہوں گے، ملک میں سیاسی استحکام ختم ہو جائے گا، معاشی استحکام ختم ہونا شروع ہوگا تو تب سب کو ہوش آئے گا؟ پھر اِس آگ کو بجھانا، معاشی گراوٹ کو روکنا، کشیدگی کو ختم کرانا اور لڑائی کو صلح میں بدلنا مشکل ہوتا جائے گا۔ ابھی وقت ہے کہ متعلقہ اشخاص اور ادارے صورتحال کا فوری ادراک کرتے ہوئے مذاکرات کا راستہ کھولیں۔ یاد رکھیں لانگ مارچ ہوا تو پھر اسمبلیوں سے استعفے بھی دور نہیں رہ جائیں گے اور یہ ہوگا تو حکومت چلنا مشکل ہو جائے گی، اور پھر صرف حکومت ہی مشکل میں نہیں ہوگی پورا پاکستان بھی مشکل میں ہوگا۔

Back to top button