پاکستانفیچرڈ پوسٹ

جسٹس وقار احمد سیٹھ کی موت طبعی تھی یا واقعی انہیں وبائی مرض کورونا وائرس کا مرض لاحق تھا؟ صحافی سلیم صافی نے کھلبلی مچا دی

عدلیہ کے وقار، ڈی آئی خان کے وقار، پختونخوا کے وقار بلکہ پورے پاکستان کے وقار جسٹس سیٹھ وقار کی کورونا کی وجہ سے موت ہوئی

سینئر صحافی سلیم صافی نے جسٹس وقار سیٹھ کی موت طبعی تھی یا واقعی انہیں وبائی مرض کورونا وائرس کا مرض لاحق تھا کے بارے میں سچائی بتا کر کھلبلی مچا دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی سلیم صافی کا کہنا تھا کہ کورونا کی وبا اب کی بار پہلے سے زیادہ ظالم بن کر لوٹی ہے اور اس نے ہمت اور جرات کے پہاڑ اور پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس سیٹھ وقار کو بھی ہم سے ہمیشہ کے لئے جدا کردیا۔عدلیہ کے وقار، ڈی آئی خان کے وقار، پختونخوا کے وقار بلکہ پورے پاکستان کے وقار جسٹس سیٹھ وقار اب ہم میں نہیں رہے۔ ان کے بعض فیصلوں اور بعض فیصلوں کے بعض فقروں سے اختلاف کیا جاسکتا ہے اور ہم نے کیا بھی۔ حقیقت یہ ہے کہ جسٹس سیٹھ وقار ان چند ججز میں سے ایک تھے، جنہوں نے تاریکی کے اس دور میں حق اور انصاف کی شمع جلائے رکھی۔ وہ ان ججز میں سے ایک تھے جو خود نہیں بولتے بلکہ ان کے فیصلے بولتے ہیں۔

Back to top button