پاکستان

کون کون چاہتا ہے کہ عرب دنیا سے پاکستان کے تعلقات خراب ہو جائیں؟ غیر ذمہ دارانہ بیانات داغنے والے تمام کردار سامنے آگئے، تہلکہ خیز انکشاف

نوبت یہاں تک آن پہنچی ہے کہ میڈیا کے ساتھ ساتھ سیاستدان بھی ایسے تبصرے کرنے سے گریز نہیں کرتے

کون کون چاہتا ہے کہ عرب دنیا سے پاکستان کے تعلقات خراب ہو جائیں؟ غیر ذمہ دارانہ بیانات داغنے والے کرداروں کے نام بھی سامنے آگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق نہ جانے کیوں ہمارے ایک طبقے کی کوشش ہے کہ ہمارے تعلقات عرب دنیا خصوصا سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے ساتھ خراب ہوں۔ جھوٹ، سچ بول کر کسی نہ کسی بہانے اب ان ممالک پر تنقید کرنا ایک عام رواج بنتا جا رہا ہے اور نوبت یہاں تک آن پہنچی ہے کہ میڈیا کے ساتھ ساتھ سیاستدان بھی ایسے تبصرے کرنے سے گریز نہیں کرتے اور یہی وجہ تھی کہ کچھ عرصہ قبل پاکستان کے وزیر خارجہ نے سعودی عرب کے متعلق ایک ایسی غیرذمہ دارانہ بات ایک ٹی وی ٹاک شو میں کر دی کہ حکومت کو ایک مصیبت پڑ گئی کہ کسی بھی طرح تعلقات کو خراب ہونے سے بچایا جائے۔ سوشل میڈیا اور یوٹیوب چینلز پر تو ان ممالک کے بارے میں ایسی ایسی غیرذمہ دارانہ اور جھوٹی باتیں ہو رہی ہیں کہ بعض اوقات محسوس ہوتا ہے کہ جیسے کسی سازش کے تحت یہ سب کچھ کروایا جا رہا ہے تاکہ پاکستان اور اِن عرب ممالک کے آپس کے تعلقات کو خراب کیا جائے اور جو تعاون اور جس کا بیشمار ثمر پاکستان حاصل کرتا رہا اور کر بھی رہا ہے، اس سے اِسے محروم کیا جائے۔

متعلقہ خبریں