پاکستان

ریاست اور عوام کے درمیان اعتماد کا رشتہ میں بریک ڈاؤن بھی بے نقاب‘ سینئر صحافی حامد میر کڑوا سچ سامنے لے آئے

تین جنوری کو بلوچستان کے علاقے مچ میں کوئلے کی کان میں کام کرنے والے گیارہ مزدوروں کو ان کے ہاتھ پاں باندھ کر ذبح کر دیا گیا

سینئر صحافی و کالم نگار حامد میر کڑوا سچ سامنے لاتے ہوئے ریاست اور عوام کے درمیان اعتماد کا رشتہ میں بڑے خوفناک بریک ڈاؤن بھی بے نقاب کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی حامد میر نے اپنے کالم میں لکھا ہے کہ سال 2021 کا آغاز صرف ہمارے پاور ٹرانسمیشن سسٹم میں بریک ڈاؤن سے نہیں ہوا۔اس سال کے آغاز میں ریاست اور عوام کے درمیان اعتماد کے رشتے میں بریک ڈان بھی بے نقاب ہو گیا ہے۔ تین جنوری کو بلوچستان کے علاقے مچ میں کوئلے کی کان میں کام کرنے والے گیارہ مزدوروں کو ان کے ہاتھ پاں باندھ کر ذبح کر دیا گیا۔

ان غریبوں کے لواحقین نے مطالبہ کیا کہ وزیراعظم عمران خان خود کوئٹہ آکر انہیں قاتلوں کی گرفتاری کی تحریری یقین دہانی کرائیں اور جب تک وزیراعظم نہیں آئیں گے وہ اپنے پیاروں کی لاشیں دفن نہیں کریں گے۔ وزیر اعظم نے وزیر اعلی اور کچھ وفاقی وزرا کو بھیج دیا اور یقین دلایا کہ ہزارہ برادری کے مظلوموں کو انصاف ضرور ملے گا لیکن ہزارہ برادری اور حکومت کے درمیان معاملات طے نہ ہو سکے۔

متعلقہ خبریں