پاکستان

عدالت کا شہباشریف کوکھلی چھوٹ دینےسےانکار

شہبازشریف نےعدالت سےاستدعا کی کہ میری طبیعت ٹھیک نہیں ہےلہٰذا مجھےجانےدیا جائے

لاہورکی احتساب عدالت نےآشیانہ ریفرنس کی سماعت کےدوران مسلم لیگ نون کےصدراورقومی اسمبلی میں قائدِ حزبِ اختلاف شہبازشریف کوجانےکی اجازت دینےسےانکارکردیا۔ لاہورکی احتساب عدالت کےجج امجد نذیرچوہدری نےکیس کی سماعت کی۔ آشیانہ ریفرنس کی سماعت کےدوران شہبازشریف نےاحتساب عدالت سےروسٹرم پہ آ کرکچھ کہنےکی اجازت طلب کی۔ شہبازشریف نےعدالت سےاستدعا کی کہ میری طبیعت ٹھیک نہیں ہےلہٰذا مجھےجانےدیا جائے۔ جج امجد نذیرچوہدری نےکہا کہ آپ ضمانت پرہوتےتوٹھیک تھا، ابھی آپ کسٹڈی میں ہیں،آپ کویہ سہولت نہیں مل سکتی،یہ قانونی تقاضہ ہے۔

لاہورکی احتساب عدالت کےجج نےمزید کہا کہ گواہوں کےبیانات قلم بند ہورہےہیں لہٰذا آپ کا عدالت میں موجود ہونا ضروری ہے۔ شہباز شریف کےوکیل نےعدالت کوبتایا کہ آج شہبازشریف سےمتعلق کوئی گواہ نہیں ہے۔ عدالت نےنیب کےگواہ کا بیان ریکارڈ کروا لیا اورکیس کی سماعت 11 فروری تک ملتوی کردی۔احتساب عدالت لاہورنےآئندہ سماعت پرنیب کےگواہوں پروکلاء کوجرح کےلیےطلب کرلیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button