پاکستانفیچرڈ پوسٹ

بزدار سرکار کے دورے حکومت میں پنجاب کی تاریخ کا سب سے بڑا مالی سکینڈل سامنے آگیا، 25 ارب سے زائد رقم کہاں خرچ کی؟ سنسنی پھیلا دینے والی خبر آگئی

پنجاب حکومت کے مختلف محکمہ جات میں 25 ارب 18 کروڑ روپے کے اخراجات کا سرے سے کوئی ریکارڈ ہی موجود نہیں ہے

بزدار سرکار کے دورے حکومت میں پنجاب کی تاریخ کا سب سے بڑا مالی سکینڈل سامنے آگیا، 25 ارب سے زائد رقم کہاں خرچ کی؟ سنسنی پھیلا دینے والی خبر آگئی۔

تفصیلات کے مطابق بزدار سرکار کے دورے حکومت میں پنجاب کی تاریخ میں سب سے بڑے مالی سکینڈل کا انکشاف ہوا ہے، جس کے مطابق پنجاب حکومت کے مختلف محکمہ جات میں 25 ارب 18 کروڑ روپے کے اخراجات کا سرے سے کوئی ریکارڈ ہی موجود نہیں ہے، اس امر کا انکشاف آڈیٹر جنرل آف پاکستان کی جانب سے تیار کی گئی مالی سال 2019-20 کی آڈٹ رپورٹ میں کیا گیا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ آڈٹ رپورٹ میں مذکورہ رقوم کے استعمال کے حوالے سے مختلف آڈٹ پیرے تیار کئے گئے لیکن پنجاب حکومت کی جانب سیان پیروں پر کوئی جواب موصول نہیں ہوا، 25 ارب روپے سے زائد کے فنڈز کہاں اور کس کی اجازت سے خرچ کئے گئے اس کا محکموں کے پاس کوئی ریکارڈ موجود نہیں اور نہ ہی محکموں نے آڈٹ ٹیموں کو ریکارڈ فراہم کیا ہے۔ رپورٹ میں نشاندہی کے بعد سول سیکرٹریٹ لاہور میں بھونچال کی کیفیت پیدا ہو گئی ہے، اس حوالے سے اہم اعلی سطحی اجلاس بھی منعقد کیا گیا، ریکارڈ کی فراہمی کے لئے بیوروکریسی نے اپنی ٹیمیں متحرک کر دی ہیں اور محکموں سے مذکورہ رقم کے استعمال کے ریکارڈ کی تلاش شروع کر دی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button