پاکستانفیچرڈ پوسٹ

ایک دن میں عمران خان کی حکومت گرا سکتا ہوں؟ وزیر دفاع نوشہرہ میں اپنی سیٹ کا دفاع کرنے میں کیوں ناکام ہوئے؟

پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما علی محمد خان نے پرویز خٹک کے بھائی سے اختلافات کو نوشہرہ میں شکست کی وجہ قرار دے دیا ہے

ایک دن میں عمران خان کی حکومت گرا سکتا ہوں؟ وزیر دفاع پرویز خٹک نوشہرہ میں اپنی سیٹ کا دفاع کرنے میں کیوں ناکام ہوئے؟ بڑی وجہ سامنے آگئی۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے رہنما علی محمد خان کا کہنا تھا کہ پرویزخٹک کے بھائی سے اختلافات نوشہرہ میں تحریک انصاف کی شکست کاسبب بنے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پرویزخٹک نیاچھاکام کیا کہ خاندان کیفردکوٹکٹ نہیں دیا۔ پرویزخٹک موروثی سیاست کیخلاف ہیں جواچھی بات ہے، ہم مان لیتے ہیں نوشہرہ میں شفاف الیکشن ہوئے۔ اس سے قبل نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما عثمان ڈار نینوشہرہ میں صوبائی اسمبلی کے حلقے میں شکست پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کی عوام کا فیصلہ تسلیم کرتا ہوں۔

نوشہرہ میں ہمارے خلاف فیصلہ آیا، ہم اس شکست کو تسلیم کریں گے، کسی خلائی مخلوق پر الزام نہیں لگائیں گے، نہ فوج یا کسی ادارے کیخلاف بیانات دیں گے۔ نوشہرہ میں شکست پر گفتگو کرتے ہوئے عثمان ڈار نے کہا کہ اصل مقابلہ پنجاب میں ہے، خیبرپختونخوا میں شکست کو تسلیم کرتے ہیں۔ واضح رہے کہ حلقہ پی کے 63 نوشہرہ میں پی ٹی آئی کو بڑا اپ سیٹ ہوا ہے جہاں مسلم لیگ ن کا امیدوار جیت گیاہے۔ صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی کے 63 کے ضمنی انتخاب کے تمام 102 پولنگ اسٹیشنز کے غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے اعلان کے مطابق مسلم لیگ (ن)کے اختیار ولی نے 21 ہزار 122 ووٹ لے کر فتح حاصل کرلی ہے، جبکہ پی ٹی آئی کے میاں عمر کاکا خیل 17 ہزار 23 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے ہیں۔ اس حلقے میں لیگی رہنما نے پی ٹی آئی کے امیدوار کو 4 ہزار 99 ووٹوں کی واضح برتری سے شکست دے دی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button