پاکستان

صحافی اجے لالوانی کی آخری رسومات ادا مگر قاتل تاحال فرار‘ پولیس خاموش

اجے لالوانی کے قتل کے بعد پولیس نے ہیئر ڈریسر شاپ کے مالک کو حراست میں لے لیا اوراس سے تفتیش جاری ہے

سکھر کے صحافی اجے لالوانی کی آخری رسومات تو ادا کر دی گئی ہے مگر ان کے قاتل تاحال فرار ہیں جبکہ پولیس بھی اپنی ڈیوٹی سے غافل ہو کر خاموش بنی ہوئی ہے۔

نجی ٹی وی سے منسلک صحافی اجے لالوانی کو بدھ کی رات مسلح شخص نے فائرنگ کرکے زخمی کیا تھا جو سول اسپتال سکھر میں زیرعلاج تھے اور جمعرات کو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے تھے۔ صحافی اجے لالوانی کی آخری رسومات صالح پٹ میں ادا کردی گئیں۔ دوسری جانب اجے لالوانی کے قتل کے بعد پولیس نے ہیئر ڈریسر شاپ کے مالک کو حراست میں لے لیا اوراس سے تفتیش جاری ہے۔ پولیس کے مطابق صحافی اجے لالوانی کو ہیئرڈریسر شاپ پرنقاب پوش نے فائرنگ کا نشانہ بنایا تھا۔ مقتول کے کزن پردیپ نے بتایا کہ سول اسپتال عملے کی کوتاہی کے باعث اجے لالوانی کی موت واقع ہوئی، سول اسپتال عملے نے پہلے بتایا الٹراساؤنڈ میں گولی نظرنہیں آرہی اورصرف طبی امداددی لیکن اگلے روز درد بڑھنے پرٹیسٹ کرائے تو گولی جسم میں ہی تھی۔

سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ایس ایس پی)عرفان سموں کاکہناہے کہ پولیس افسران سمیت جائے وقوعہ کا خود بھی معائنہ کیا جہاں سے گولیوں کے خول سمیت تقریبا تمام شواہد اکٹھے کیے۔ ادھر قتل کی تحقیقات کیلئے ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ڈی ایس پی)کی سربراہی میں 4 رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button