پاکستانفیچرڈ پوسٹ

جیلوں میں قید قیدیوں کی خود کشیوں میں اضافہ، جیل میں قید ایک اور قیدی کی موت، جیل انتظامیہ کو لینے کے دینے پڑ گئے، سپرنٹنڈنٹ کی نوکری داؤ پر لگ گئی

ملزم اسلام ذہنی مریض اور مینٹل وارڈ میں داخل تھا، ملزم نے فجر کی نماز کے بعد خود کو چادر کی مدد سے پھانسی دے دی: جیل سپرنٹنڈنٹ
جیلوں میں قید قیدیوں کی خود کشیوں میں اضافہ، جیل میں قید ایک اور قیدی کی موت، جیل انتظامیہ کو لینے کے دینے پڑ گئے، سپرنٹنڈنٹ کی نوکری داؤ پر لگ گئی ہے۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ گذشتہ روز مردان جیل میں موجود قیدی نے مبینہ طور پر خودکشی کرلی جس کے بعد جیل انتظامیہ کے خلاف انکوائری کرنے ک یلئے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق چند روز قبل پشاور کے ایک تھانے میں قیدی کی خود کشی کی خبر سامنے آئی تھی، ابھی اس خبر کی تحقیقات جاری ہیں کہ مردان جیل میں قید ایک ملزم کی خود کشی کی خبر سامنے آگئی۔ جیل سپرنٹنڈنٹ کے مطابق 35 سالہ ملزم محمد اسلام کا تعلق مردان کے نواحی علاقے میاں خان سے ہے اور اسے چرس رکھنے کے جرم میں گرفتار کیا گیا تھا، تاہم اسلام ذہنی مریض اور مینٹل وارڈ میں داخل تھا، ملزم نے فجر کی نماز کے بعد خود کو چادر کی مدد سے پھانسی دے دی۔ ملزم کی لاش پوسٹ مارٹم کے لئے منتقل کردی گئی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button