پاکستان

ٹی وی پروگرام کے دوران وفاقی وزیر زرتاج گل کی طبیعت کیوں خراب ہوئی؟ اچانک ہنگامہ کھڑا ہوگیا، حکومت کے لئے تشویشناک خبر سامنے آگئی

مجھے سخت ترین میگرین اسٹارٹ ہو گئی ہے اور میں آپ کے پروگرام میں مزید نہیں بات کر سکتی ہو سکتا ہے تو مجھے اجازت دیجیے

ٹی وی پروگرام کے دوران وفاقی وزیر زرتاج گل کی طبیعت کیوں خراب ہوئی؟ اچانک ہنگامہ کھڑا ہوگیا، حکومت کے لئے تشویشناک خبر سامنے آگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں پی ٹی آئی کی خاتون رہنماء زرتاج گل کو مریم نواز کی نیب کورٹ پیشی کے حوالے سے گفتگو کرنے کے لیے دعوت دی گئی تھی۔ پروگرام میں کورونا کی حالیہ لہر اور نیب کے موضوع پر گفتگو کی جا رہی تھی کہ وفاقی وزیر کی طبیعت اچانک خراب ہو گئی۔پروگرام میں ن لیگ کے راہنما ڈاکٹر طارق فضل بھی شریک گفتگو تھے۔ پروگرام کے اینکر عمران خان نے کہا کہ مجھے افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ عوام کو اپنی جان اور صحت کہ پرواہ نہیں ہے ا ور وہ کسی قسم کے کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کرتے نظر نہیں آ رہے۔شادی بیاہ کے فنکشن اور دیگر تقریبات بھی جاری ہیں اور مارکیٹ میں جانے والے لوگ بھی ماسک لگاتے نظر نہیں آتے۔ اگر یہ حالات رہے تو ماحول مزید بگڑتا نظر آرہاہے۔ تو اس موضوع پر وفاقی وزیر زرتاج گل نے بات کرتے ہوئے کہاکہ حکومت اپنے طور پر کوشش کررہی ہے اور لاک ڈاؤن میں بھی مزید سختیاں کی جا رہی ہیں تاہم یہ لوگوں کی اپنی ذمہ داری بھی ہے کہ وہ احتیاط کریں۔

ٹی وی پروگرام میں مریم نواز کی نیب پیشی کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے پہلے بھی نیب پر جتھے لے جا کر چڑھائی کی تھی اور اب بھی وہ کچھ ایسا ہی کرنے جا رہی ہیں تاہم نیب آزاد اور خود مختار ہے اور وہ احتساب کا عمل جاری رکھے گا۔ اسی موضوع پر ڈاکٹر طارق فضل چودھری گفتگو کر رہے تھے تو زرتاج گل نے درمیان میں مداخلت کرتے ہوئے کہا کہ میری طبیعت ٹھیک خراب ہو رہی ہے جس پر اینکر عمران خان نے انہیں کہا کہ محترمہ آپ کیا کہنا چاہ رہی ہیں۔جس پر لائیو پروگرام میں زرتاج گل نے کہا کہ مجھے سخت ترین میگرین اسٹارٹ ہو گئی ہے اور میں آپ کے پروگرام میں مزید نہیں بات کر سکتی ہو سکتا ہے تو مجھے اجازت دیجیے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button