پاکستان

کورونا کیسز،پمزاسپتال نےریڈ الرٹ جاری کردیا

کورونا مریضوں کےلئےمختص تین اسپتالوں میں آکسیجن بیڈزمکمل بھرگئےہیں

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کورونا وائرس کےبڑھتےکیسزپرپاکستان انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسس (پمز)اسپتال کی انتظامیہ نےریڈ الرٹ جاری کردیا ۔ ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر(ڈی ایچ او)اسلام آباد کےمطابق کورونا مریضوں کےعلاج کیلئے 15 سرکاری اورنجی اسپتال مختص کیےگئےہیں،کورونا مریضوں کےلئےمختص تین اسپتالوں میں آکسیجن بیڈزمکمل بھرگئےہیں۔ ڈی ایچ اوکا کہنا ہےکہ کورونا مریضوں کےلئے مختص 4 اسپتال میں وینٹی لیٹرزبھرگئےہیں،مزید گنجائش نہیں ہے،پمزاسپتال میں 163 آکسیجن بیڈزمیں سے 120 کورونا مریضوں سےبھر گئےہیں۔

ڈی ایچ اونےبتایا کہ متعدی بیماریوں کیلئےقائم آئی ایچ آئی ٹی سی اسپتال میں 70 آکسیجن بیڈزمیں سے 50 پرکورونا مریض ہیں،پولی کلینک اسپتال میں 27 آکسیجن بیڈزمیں سے 24 پرکورونا مریض زیرعلاج ہیں جبکہ سی ڈی اے اسپتال میں سے 43 آکسیجن بیڈزمیں سے 32 پر کورونا مریض ہیں۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر(این سی اوسی) کےمطابق مجموعی طورپراسلام آباد میں کورونا مریضوں کیلئے 64 فیصد وینٹی لیٹرزمریضوں سےبھرگئےہیں۔ دوسری جانب اسلام آباد میں ہیلتھ کئیرورکرزکی ویکسین رجسٹریشن روک دی گئی ہے،ذرائع کا کہنا ہے کہ ہیلتھ کئیرورکرزکی ویکسین رجسٹریشن ایک ہفتےسےرکی ہوئی ہے۔

ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر(ڈی ایچ او)کا کہنا ہےکہ ہیلتھ کئیرورکرزکو ویکسین رجسٹریشن کےلیےڈیڑھ ماہ سےزیادہ وقت دیا گیا تھا،اب ہیلتھ کیئر ورکرزکواسپتال جا کررجسٹریشن کےلیےکہا گیا ہے ۔ واضح رہےکہ پاکستان میں 24 گھنٹےکےدوران کورونا ٹیسٹ مثبت آنےکی شرح11 اعشاریہ 2 فیصد تک جاپہنچی ہے،کورونا وائرس سےایک دن میں مزید 41 افراد جاں بحق ہوگئے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر(این سی اوسی) کےاعداد وشمارکےمطابق پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کےدوران کورونا وائرس کےمزید4 ہزار525 کیسزسامنےآئےہیں،مزید 41 افراد اس موذی وباء کےسامنےزندگی کی بازی ہارگئے،جبکہ اس بیماری سے 2ہزار268 مریض شفایاب ہوگئے۔ ملک بھرمیں کورونا وائرس سےانتقال کرنےوالوں کی مجموعی تعداد 14 ہزار256ہوگئی ہے،جبکہ کُل مریضوں کی تعداد 6 لاکھ59ہزار116ہوچکی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button