پاکستان

بیٹوں کا بوڑھی ماں پر بہیمانہ تشدد، کونسے ہتھیار سے تابڑ توڑ وار کیے؟ تنازعہ کی وجہ کیا تھی؟ گھریلو جھگڑے کی افسوسناک کہانی سامنے آنے کے بعد سب دنگ رہ گئے

بد بخت بیٹوں کا سگی والدہ پر مبینہ تشدد، بیٹوں نے جگہ کے احاطے کی وجہ سے تشدد کا نشانہ بنایا تشدد کے دوران ڈنڈوں سے مار کر لہولہان کردیا

بیٹوں کا بوڑھی ماں پر بہیمانہ تشدد، کونسے ہتھیار سے تابڑ توڑ وار کیے؟ تنازعہ کی وجہ کیا تھی؟ گھریلو جھگڑے کی افسوسناک کہانی سامنے آنے کے بعد سب دنگ رہ گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق بد بخت بیٹوں کا سگی والدہ پر مبینہ تشدد، بیٹوں نے جگہ کے احاطے کی وجہ سے تشدد کا نشانہ بنایا تشدد کے دوران ڈنڈوں سے مار کر لہولہان کردیا۔ جائیداد کے نشے نے مقدس رشتوں کی پہچان بھلا دی، لیاقت پورکے علاقے میں افسوس ناک واقعہ میں پیش آیا، جہاں سنگ دل بیٹوں نے اپنی ہی ماں کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بناڈالا۔ متاثرہ خاتون رضیہ بی بی کی بیٹوں کے تشدد کے باعث انگلی ٹوٹ گئی اور اندرونی چوٹیں بھی آئیں۔رضیہ بی بی کا کہنا تھا اس کے بیٹوں شبیر، دستگیر اور شفیق نے تشدد کا نشانہ بنایا۔

رضیہ بی بی رضیہ بی بی چک نمبر 15 اے کی رہائشی ہے۔عورت جو ماں ہے، بہن ہے، بیوی ہے اور بیٹی ہے، اس کے باوجود عورت کو پرانے اور بے بنیاد نظریات کی بناہ پر ظلم کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔خواتین کے حقوق کے تحفظ کے لیے بہت سے اقدامات کیے گئے لیکن اس کے باوجود پاکستان میں خواتین پر تشدد، قتل غارت کے واقعات روز بہ روز بڑھ رہے ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ ماہ 45 سالہ شہزادی بی بی کو اس کے بیٹے احمد نے فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھااور موقع سے فرار ہو گیا۔ اطلاع ملنے پر پولیس موقع پر پہنچ گئی تھی،جنہوں نے فرانزک ماہرین کی مدد سے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کر لئے ہیں۔ پولیس کا کہنا تھا کہ ابتدائی تحقیقات کے دوران واقعہ گھریلو جھگڑے کا نتیجہ معلوم ہوتا ہے، تاہم مقتولہ کی لاش پوسٹ مارٹم کے لیے مردہ خانے منتقل کردی گئی ہے جبکہ مختلف پہلوں پر تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button