پاکستانفیچرڈ پوسٹ

وفاقی حکومت نے قومی بینکوں سے کتنے ارب ڈالر کا قرض لیا؟ غیر ملکی قرضوں سمیت ٹوٹل قرضہ کتنا ہوگیا؟ اسٹیٹ بینک نے بڑے راز سے پردہ اٹھا کر حکومت کی بولتی بند کر دی

حکومت کے مقامی قرضوں میں فروری 2020 سے فروری 2021 تک 11.7 فیصد اضافہ‘مجموعی قرضہ 24 ہزار 780 ارب روپے ہو گیا

وفاقی حکومت نے قومی بینکوں سے کتنے ارب ڈالر کا قرض لیا؟ غیر ملکی قرضوں سمیت ٹوٹل قرضہ کتنا ہوگیا؟ اسٹیٹ بینک نے بڑے راز سے پردہ اٹھا کر حکومت کی بولتی بند کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق وفاقی حکومت کے مقامی قرضوں میں فروری 2020 سے فروری 2021 تک 11.7 فیصد اضافہ ہوا جس کے بعد مجموعی قرضہ 24 ہزار 780 ارب روپے ہو گیا ہے۔ رپورٹ کے مطابق ایک سال میں محصولات کی وصولی میں اضافے کے باوجود مقامی قرضہ فروری 2020 میں 22 ہزار 784 ارب روپے میں 11.7 فیصد اضافہ ہوا جو زیادہ اخراجات اور مالی خسارے میں اضافہ کی عکاسی کرتا ہے.

اعداد و شمار کے مطابق مقامی قرض میں 2 ہزار 596 ارب روپے تک کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا اسٹیٹ بینک کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق رواں مالی سال کے 8 ماہ کے دوران گھریلو قرضے میں 6. 4 فیصد اضافہ ہوا جو ایک ہزار 498 ارب روپے بنتا ہے جون 2020 میں مقامی قرضہ 23 ہزار 282 ارب روپے تھا تاہم غیر ملکی قرضوں سمیت وفاقی حکومت کے کل قرضوں سے اس اعداد و شمار میں کمی رہی کیونکہ گزشتہ 12 ماہ کے دوران 9 اعشاریہ 5 فیصد کا اضافہ نوٹ کیا گیا۔ غیر ملکی قرض سمیت کل قرض فروری 2020 میں 33 ہزار 417 ارب روپے تھا جو فروری 2021 میں 36 ہزار 417 ارب روپے تک پہنچ گیا رواں مالی سال کے دوران مجموعی قرضوں میں نمو نمایاں طور پر کم تھی کیونکہ اس میں مالی سال 21 کے 8 ماہ کے دوران ایک ہزار 505 ارب روپے اضافہ ہوا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button