پاکستانفیچرڈ پوسٹ

بس بہت ہو گئی بونگیاں‘ اب غلطیاں برداشت نہیں کی جائیں گی‘ کام کر کے دیکھنا ہوگا‘ ورنہ آپ کا انجام بھی ……؟ وزیراعظم کی وزیراعلیٰ پنجاب کو آخری وارننگ

عثمان بزدار کو اس وقت سخت وقت کا سامنا کرنا پڑتا ہے جب وزیراعظم سے ملاقات کرتے ہیں کیونکہ وہی ان کے تنہا حامی ہیں

بس بہت ہو گئی بونگیاں‘ اب غلطیاں برداشت نہیں کی جائیں گی‘ کام کر کے دیکھنا ہوگا‘ ورنہ آپ کا انجام بھی ……؟ وزیراعظم کی وزیراعلیٰ پنجاب کو آخری وارننگ دیدی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے قریبی سمجھے جانے والے کابینہ کے ایک وزیر نے دعوی کیا ہے کہ عثمان بزدار کو آخری وارننگ دے دی گئی ہے کہ کارکردگی دکھائیں ورنہ نتائج بھگتنے کو تیار ہو جائیں۔ ذرائع کے مطابق کارکردگی دکھانے کے معاملے میں عمران خان نے وزیر اعلی پنجاب کو چند ماہ کا وقت دیا ہے۔ حالیہ ہفتوں کے دوران وزیر اعلیٰ پنجاب اخبارات کے لیے سیاسی بیانات جاری کرنے کے معاملے میں خاصے فعال نظر آرہے ہیں اور ساتھ ہی حکومت کی کارکردگی پر پریس کانفرنسز کر رہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ حکومت اور پی ٹی آئی میں ہر شخص ماسوائے وزیراعظم یہ سمجھتا ہے کہ عثمان بزدار کو ایک ایسی ذمہ داری دے دی گئی ہے جو ان کی صلاحیت و استعداد سے بڑی ہے۔

اگر وزیراعظم چپڑاسی سے بھی پوچھیں تو وہ بتائے گا کہ عثمان بزار غلط انتخاب ہیں۔وزیر نے انکشاف کیا کہ عثمان بزدار کو اس وقت سخت وقت کا سامنا کرنا پڑتا ہے جب وزیراعظم سے ملاقات کرتے ہیں کیونکہ وہی ان کے تنہا حامی ہیں۔کابینہ کے ذریعے نے یہ بھی بتایا ہے کہ ان کی معلومات کے مطابق ن لیگ کی اعلی قیادت نے پارٹی کو کارکنوں کو عثمان بزدار پر تنقید سے روک دیا ہے کیونکہ ن لیگ جانتی ہے کہ جب تک پنجاب میں عثمان بزدار کی حکمرانی ہے اس وقت تک ن لیگ کو فائدہ ہوتا رہے گا۔کہا جاتا ہے کہ پنجاب کے وزیراعلیٰ کے انتخاب کے معاملے میں اسٹیبلشمنٹ عمران خان کی پسند سے خوش نہیں ہیں، ماضی میں ان لوگوں نے وزیراعظم کو براہ راست اپنے عدم اطمینان سے آگاہ کر دیا تھا لیکن عمران خان کی رائے ہے کہ اگر عثمان بزدار کو ہٹا دیا گیا تو ان کی جگہ پر کس کس پر بھروسہ کیا جاسکتا ہے۔وزیر نے مزید بتایا ہے کہ اس مرتبہ عثمان بزدار کو آخری وارننگ دے دی گئی ہے اور ان کے پاس کارکردگی دکھانے کے لئے بجٹ تک کا وقت ہے، ذریعے نے کہا ہے کہ وزیراعظم وارننگ ملنے کے بعد سے کم از کم میڈیا کی حد تک سرگرم ہوگئے ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button