پاکستان

کے پی کے حکومت نے وزیراعظم کے منشور کفایت شعاری کو ہوا میں اڑا دیا‘ قومی خزانے کو کروڑوں روپے کا ٹیکہ لگانے کی منصوبہ بندی مکمل‘ بھیجی گئی سمری پر کیا جواب ملا؟ پتا چل گیا

3 نئی بلٹ پروف بی ایم ڈبلیو گاڑیوں کی بھیجی گئی سمری کو مسترد کر دیا گیا، نئی گاڑیوں کی مالیت 15 کروڑ سے بھی زیادہ کی بتائی جاتی ہے

کے پی کے حکومت نے وزیراعظم کے منشور کفایت شعاری کو ہوا میں اڑا دیا‘ قومی خزانے کو کروڑوں روپے کا ٹیکہ لگانے کی منصوبہ بندی مکمل‘ بھیجی گئی سمری پر کیا جواب ملا؟ پتا چل گیا۔

تفصیلات کے مطابق کے پی کے حکومت نے وزیراعظم کے منشور کفایت شعاری کو ہوا میں اڑاتے ہوئے گورنر ہاؤس کے لئے مزید 3 بلٹ پروف گاڑیوں کی ڈیمانڈ کر دی ہے۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ گورنر ہاؤس کے پی کے پاس پہلے ہی 2 بلٹ پروف گاڑیاں موجود ہیں جبکہ مزید 3 بلٹ پروف گاڑیوں کا مطالبہ سامنے آنے کے بعد وفاقی وزراء حیران رہ گئے ہیں۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ گورنر ہاؤس کے پی کے میں 2 گاڑیاں پہلے سے موجود ہونے کے باوجود مزید گاڑیوں کی ضرورت نہیں ہے لیکن اس کے باوجود بھی نئی گاڑیوں کی ڈیمانڈ کرنا سمجھ سے بالا تر ہے کیونکہ ان گاڑیوں کی قیمت کروڑوں روپے میں بتائی جاتی ہے۔

ذرائع نے مزید بتایا ہے کہ گورنر ہاؤس کے لئے 15 کروڑ سے زائد مالیت کی تین نئی بی ایم ڈبلیو گاڑیاں خریدنے کے لئے چند روز قبل سمری وزیراعلیٰ کو بھجوائی گئی تھی جس پر معاون خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش کا ردعمل بھی سامنے آگیا ہے انہوں نے کہا ہے کہ وزیراعظم کے منشور کے مطابق بجٹ کو مدنظر رکھ کر سمری منظور نہیں کی گئی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button