پاکستان

عمران خان کی کرسی کوکس خطرہ؟شاہد خاقان عباسی نےواضح کردیا

شاہد خاقان عباسی نےکہا کہ وزیرِاعظم عمران خان کی ہی نہیں وزیرِاعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکی کرسی بھی جہانگیرترین کےہاتھ میں ہے

عمران خان کی کرسی کوکس خطرہ؟شاہد خاقان عباسی نےواضح کردیا،مسلم لیگ نون کےرہنما اورسابق وزیرِاعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہےکہ آج وزیرِ اعظم عمران خان کی کرسی جہانگیرترین کےہاتھ میں ہے۔ کراچی میں میڈیا سےگفتگوکرتےہوئےمسلم لیگ نون کےرہنما اورسابق وزیرِاعظم شاہد خاقان عباسی نےکہا کہ وزیرِاعظم عمران خان کی ہی نہیں وزیرِاعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکی کرسی بھی جہانگیرترین کےہاتھ میں ہے۔ انہوں نےکہا کہ حکومت پہلےدن سےہی گری ہوئی ہے، اے این پی کےفیصلےکا احترام کرتےہیں،جس سےنقصان اے این پی کا ہوگا۔ شاہد خاقان عباسی نےکہا کہ تحریکِ انصاف کا سینئرآدمی کہہ رہا ہےکہ مجھےدبانےکےلیےمقدمات بنے،جہانگیرترین پربننےوالےمقدمات کا تعلق چینی سےنہیں ہے۔

انہوں نےکہا کہ نیب عوام کےنمائندوں کےخلاف پولٹیکل انجینئرنگ کا ادارہ ہے،کوئی بھی تحریک اصولوں پرسمجھوتہ کرکے کامیاب نہیں ہوتی۔ سابق وزیرِاعظم نےکہا کہ کیس 2 سال سےچل رہا ہے،ہمیں بھی نہیں معلوم کیس کیا ہے،جہانگیرترین خود کہہ رہےہیں کہ انہیں بھی نہیں معلوم کیس کیا ہے۔ ان کا کہنا ہےکہ ایف بی آرکا چھٹا چیئرمین بھی آ گیا ہے،جس ملک میں پیسےبنانےوالےادارے کا سربراہ 6 ماہ رہتا ہووہاں کیا ہوگا،کسی کونہیں معلوم کہ ملک کا وزیرِخزانہ کون ہے،کام کون کررہا ہے؟

شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہےکہ ہرروزبجلی اورپیٹرول کی قیمتوں میں اضافہ ہو رہا ہے،بجلی کا بل 2 ہزارسےبڑھ کر 5 ہزارپہنچ گیا،وزیرِ اعظم عمران خان نےآج تک مہنگائی اورعام آدمی کی تکلیف کا ذکرنہیں کیا۔ انہوں نےمزید کہا کہ کسی کونہیں معلوم کہ یہ ملک کدھرجا رہا ہے،جہانگیرترین کےساتھ 40 سےزیادہ حکومتی لوگ تھے۔ مسلم لیگ نون کےرہنما کا یہ بھی کہنا ہےکہ جہانگیرترین نےخود اپنی حکومت پر عدم اعتماد کا اظہارکیا ہے،یہ سرکس کا تماشہ لگا ہوا ہے،یہ بات زیادہ دیرنہیں چلےگی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.