پاکستان

بجلی پر عائد کیے گئے کتنے ٹیکسز نامنظور کر دیئے گئے؟ پاکستان کی بزنس کونسل کے اعلان بغاوت نے عمران حکومت کو ہلا کر رکھ دیا، ملک بھر میں سنسنی پھیلا دینے والی خبر

صنعتوں کی مسابقت سے انکار اور پالیسیوں کو اچانک واپس لے کر سرمایہ کاروں کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی جائے: احسان اے مالک

بجلی پر عائد کیے گئے کتنے ٹیکسز نامنظور کر دیئے گئے؟ پاکستان کی بزنس کونسل کے اعلان بغاوت نے عمران حکومت کو ہلا کر رکھ دیا، ملک بھر میں سنسنی پھیلا دینے والی خبر آگئی۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کی بڑی کارپوریشنز اور بینکوں کی نمائندگی کرنے والے لابی گروپ پاکستان بزنس کونسل (پی بی سی)نے ٹیکسز اور بجلی کے نرخوں میں 27 فیصد اضافہ کرنے کے منصوبے کی مخالفت کردی۔ اس اضافے پر حکومت نے آئی ایم ایف کے قرض پروگرام کی بحالی کے لیے رضامندی کا اظہار کیا تھا۔ رپورٹ کے مطابق وزیر خزانہ حماد اظہر کو ارسال کردہ ایک خط میں پی بی سی نے نشاندہی کی کہ ‘ان اقدامات کی سمت’ بہت سے چیلنجز کی مخالف ہے۔ان چیلنجز میں ملک کو درپیش کورونا وائرس کی تیسری لہر کے دوران روزگار کا تحفظ، اشیائے خورونوش کی قلت اور مہنگائی، برآمدات میں اضافہ کرنا اور تجارتی توازن میں اشیا کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کے دبا کو روکنے کے لیے مقامی صنعت میں مسابقت پیدا کرنا شامل ہیں۔

پی بی سی کے چیف ایگزیکٹو احسان اے مالک نے وزیر کو ارسال کردہ خط میں لکھا کہ معیشت کی ترقی کو تباہ کرنے کایقینی طریقہ یہ ہے کہ ملازمتوں اور ڈسپوزایبل آمدنی کو ختم، طلب کم کی جائے، صنعتوں کی مسابقت سے انکار اور پالیسیوں کو اچانک واپس لے کر سرمایہ کاروں کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے ہی بجلی کی لاگت غیر مسابقتی ہے اس پر نرخوں میں 27 فیصد اضافے کا بوجھ دیانت دار صارفین کے کندھوں پر پڑے گا جسے نمو نہیں بڑھے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ 5 برآمداتی شعبوں کو مقامی مسابقتی لاگت پر توانائی نہ فراہم کرنا اور کیپٹو پاور پروڈیوسرز کو گرڈ پر منتقلی کے لیے مجبور کرنا برآمدات کے لیے اچھا نہیں رہے گا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.